موسلا دھار بارش، نشیبی علاقے زیر آب، کرنٹ لگنے سے شہری چل بسا، بجلی کا نظام درہم برہم

موسلا دھار بارش، نشیبی علاقے زیر آب، کرنٹ لگنے سے شہری چل بسا، بجلی کا نظام ...

  

 لاہور(لیڈی رپورٹر،کرائم رپورٹر)صوبائی دارالحکومت میں چند گھنٹوں کی بارش سے نشیبی علاقے ڈوب گئے،شہر میں ٹریفک اور بجلی کا نظام درہم برہم ہو گیا۔بارش کے باعث گزشتہ روز کرنٹ لگنے سے شہری دم توڑ گیا۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ روزلاہور میں موسلادھار بارش نے انتظامیہ کی کارکردگی کا پول کھول دیا۔تاج پورہ میں سب سے زیادہ 107 ملی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی، جوہر ٹاؤن میں 103، نشتر ٹاؤن میں 91، ایئرپورٹ 86، پانی والا تالاب میں 81 ملی میٹر بارش ہوئی۔لکشمی چوک میں 73، اپر مال 72، فرخ آباد میں 68، گلشن راوی میں 65 اعشاریہ 2 ملی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی۔ایئر پورٹ، ڈیوس روڈ، لکشمی چوک، جی ٹی روڈ، ایک موریہ پل، حاجی کیمپ اور اچھرہ اور برقی روڈندی نالوں میں تبدیل ہوگئے۔ کنٹونمنٹ بورڈ اپنے علاقے میں گندے نالوں کی صفائی بروقت نہ کر سکا یہی وجہ ہے کہ گزشتہ روز بارش کا پانی سیوریج کی نظر ہونے کی بجائے لوگوں کے گھروں میں داخل ہوگیا۔ بارش کے بعد لیسکو کا سسٹم بھی بیٹھ گیا۔بجلی نہ ہونے سے بارش کے بعد دھوپ اور حبس کے باعث شہری بلبلا اٹھے۔محکمہ موسمیات کے مطابق پنجاب سمیت ملک کے بیشتر علاقوں میں بارش کا سلسلہ آئندہ دو روز تک جاری رہے گا۔دریں اثنا فیکٹری ایریا کے علاقے میں چالیس سالہ محمد رفیق ٹرانسفارمر ٹرالی سے کرنٹ لگنے سے موقع پر جاں بحق ہو گیاپولیس کا کہناہے کہ فیکٹری ایریا کے علاقہ میں بارش کے باعث ٹرانسفارمر ٹرالی میں کرنٹ آگیا جس کے باعث واقعہ پیش آیا، 40 سالہ رفیق کرنٹ لگنے سے دم توڑ گیا پولیس نے لاش کو مردہ خانے منتقل کر دیا۔ 

لاہور،بارش

مزید :

صفحہ اول -