عدلیہ کا’ دور افتخار ‘اختتام کو پہنچا

عدلیہ کا’ دور افتخار ‘اختتام کو پہنچا
عدلیہ کا’ دور افتخار ‘اختتام کو پہنچا

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) چیف جسٹس آف پاکستان افتخار محمد چوہدری بدھ کو اپنی ذمہ داریوں سے سبکدوش ہورہے ہیں اوراس دور اُنہوں نے جہاں کئی مقبول فیصلے کیے وہیں کچھ غیر مقبول فیصلے بھی اُن کے دور میں ہوئے ہیں ۔اُنہوںنے بیوروکریسی ،نیب ، ایف آئی اے اور سیاستدانوں کوجہاں نکیل ڈالی ، وہیں صدارتی انتخابات کی تاریخ کی تبدیلی جیسے غیر مقبول فیصلے بھی ہوئے ،افتخارمحمد چوہدری کی ایک آمر کے آگے ”نہ“ نے عدلیہ کو کمزور سے ایک مضبوط ادارہ بنادیا۔ پاکستان کی عدالت عظمیٰ کے سربراہ چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کے آج ریٹائرمنٹ کے بعد عدلیہ کی تاریخ کا ایک سنہری باب بند ہو جائے گا۔ ان کے جوڈیشل ایکٹوازم سے جہاں عام آدمی کی داد رسی ہوئی وہاں حکمرانوں کی نیندیں بھی حرام ہوئیں۔ عدلیہ کی نافرمانی کے جرم میں سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کو گھر بھیج دیا جبکہ دوسرے وزیراعظم راجہ پرویز اشرف تاحال رینٹل پاور کیس بھگت رہے ہیں۔ چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے ہی میاں محمد نواز شریف کو انصاف فراہم کیا اور ڈوگر کورٹ سے نااہل قرار دینے کا فیصلہ کالعدم قراردے کر ان کے اقتدار تک پہنچنے میں حائل رکاوٹیں دور کر دیں۔ چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کو نظر بند کرنے پر جنرل (ر) پرویز مشرف کو آج آئین کے آرٹیکل 6 کے تحت غداری کے مقدمے کا سامنا ہے۔ چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے حکمرانوں کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر تاریخی فیصلے کئے اور این آر او کو کالعدم قرار دے دیا۔افتخار محمدچوہدری کے ہی دور میں اُن کے اپنے بیٹے کا سکینڈل بھی سامنے آیا جس پر کوئی قابل ذکر پیش رفت نہ ہوسکی ۔ جعلی ڈگری اور دوہری شہریت کے حامل ارکان پارلیمنٹ کو نااہل قرار دیا اور لاپتہ افراد کی توانا آواز بنے رہے۔ انہوں نے با رہا ایسے فیصلے دئیے جو پارلیمنٹ کیلئے قانون سازی کا باعث بنے۔ امریکی نیشنل لاءجرنل نے لائیر آف دی ایئر 2007ءکے ایوارڈ، 10 مئی 2008ءکو ساﺅتھ ایسٹرن یونیورسٹی نے ڈاکٹر آف لاءکی اعزازی ڈگری، 17 نومبر 2008ءکو دی ایسوسی ایشن آف دی بار آف سٹی نیویارک نے عدلیہ اور وکلاءکی آزادی کا نشان قرار دے کر ایسوسی ایشن کی اعزازی ممبر شپ، 10 نومبر 2008ءکو ہاورڈ لاءسکول نے میڈل آف فریڈم، 28 مئی 2012ءکو بھارتی تنظیم پیٹا نے ہیرو ٹو اینیمل ایوارڈ دیا گیا۔ چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری پہلے پاکستانی ہیں جنہوں نے میڈل آف فریڈم حاصل کیا۔ قبل ازیں یہ ایوارڈ جنوبی افریقہ کے آنجہانی صدر نیلسن منڈیلا اور چارلس ملٹن ہاسٹن کو دیا گیا تھا۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -