امن مشنز کو مناسب وسائل اورمینڈیٹ فراہم کرنیکی ضرورت ہے،وزیر دفاع

 امن مشنز کو مناسب وسائل اورمینڈیٹ فراہم کرنیکی ضرورت ہے،وزیر دفاع

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) وزیر دفاع پرویز خٹک نے عالمی برادری پر زور دیا ہے کہ وہ عالمی امن کو فروغ دینے اور اقوام متحدہ کے امن دستوں کے ڈھانچے کو مضبوط بنانے کے کثیرالجہتی عزم کا اعادہ کرے، گزشتہ چھ دہائیوں کے دوران 2لاکھ سے زائد پاکستانی امن دستوں نے اقوام متحدہ کے امن مشن میں خدمات انجام دیں۔ انہوں نے جمہوریہ کوریا کی میزبانی میں منعقدہ ورچوئل پیس کیپنگ وزارتی اجلاس میں پیش کیے گئے پہلے سے ریکارڈ شدہ ویڈیو پیغام میں یہ بات کہی۔ اس اجلاس کی سربراہی 7سے 8دسمبر2021 تک پاکستان کے ساتھ10دیگر ریاستوں بنگلہ دیش، کینیڈا، ایتھوپیا، انڈونیشیا، جاپان، کنگڈمآف نیدرلینڈز، روانڈا، یوراگوئے، برطانیہ اور ریاست ہائے متحدہ امریکہ نے کی۔ پاکستان نے 25 سے 26اکتوبر 2021تک ہالینڈ کے ساتھ امن کی تیاری کی کانفرنس کی مشترکہ میزبانی بھی کی۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان نہ صرف فوجی تعاون کرنیوالا ایک بڑا ملک ہے، اس وقت اقوام متحدہ کے امن آپریشنز میں 3800سے زائد فوجی تعینات ہیں، بلکہ سب سے پرانے امن مشن میں سے ایک، یو این ملٹری آبزرور گروپ میزبان بھی ہے۔ 

وزیر دفاع

مزید :

صفحہ اول -