متاثرین کو سہولیات فراہم کی جا رہی ہیں، خود نگرانی کر رہا ہوں: اقبال وزیر

      متاثرین کو سہولیات فراہم کی جا رہی ہیں، خود نگرانی کر رہا ہوں: اقبال ...

  

       پشاور(سٹاف رپورٹر)افغانستان میں مقیم  شمالی وزیرستان کی تحصیل دتہ خیل  کے 30 سے زائد متاثرہ خاندان براستہ غلام خان بارڈر گزشتہ روز اپنے وطن واپس پہنچ گئے ہیں خیبر پختونخوا کے وزیر برائے ریلیف بحالی وآبادکاری اقبال وزیر, جی او سی اور ڈپٹی کمشنر نے متاثرین کو واپس اپنے ملک پہنچنے پر  خوش آمدیدکہا۔ اس موقع پر صوبائی وزیر اقبال وزیر کا کہنا تھا کہ شمالی وزیرستان کے متاثرین کے لئے  تمام تر انتظامات کی خود نگرانی کررہا ہوں،  انہوں نے کہا کہ محکمہ ریلیف، پی ڈی ایم اے، سول ڈیفنس اور ریسکیو کی ٹیموں کے علاوہ نادرا ور سول انتظامیہ متاثرین کو بہترین سہولیات فراہم کررہی ہیں متاثرین کے لئے شیلٹرز، کمبل اور ادویات سمیت تمام انتظامات مکمل کئے گئے ہیں، اقبال وزیر نے متاثرین کی وطن واپسی پر بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ افغانستان سے متاثرین کی واپسی اس بات کا ثبوت ہے کہ علاقے میں امن مکمل طور پر بحال ہوچکا ہے جس کے لئے پاک فوج سمیت تمام فورسز اور عوام نے بڑی قربانیاں دی ہیں۔  انہوں نے کہا کہ قبائلی اضلاع سمیت پورے صوبے اور ملک میں امن قائم کرنا موجودہ صوبائی اور وفاقی حکومتوں کی اولین ترجیحات میں شامل ہیں۔انہوں نے کہا کہ امن قائم ہونے کے بعد ترقی کا عمل تیزی سے جاری ہے، اقبال وزیر نے مزید کہا کہ وزیرستان کے عوام امن قائم کرنے کے لئے پاک فوج کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔  

مزید :

صفحہ اول -