بھکاریوں نے معذور بچہ اغوا کرکے کان کاٹ دیے، دانت توڑ کر ڈھائی لاکھ میں بیچ دیا

بھکاریوں نے معذور بچہ اغوا کرکے کان کاٹ دیے، دانت توڑ کر ڈھائی لاکھ میں بیچ ...
بھکاریوں نے معذور بچہ اغوا کرکے کان کاٹ دیے، دانت توڑ کر ڈھائی لاکھ میں بیچ دیا
سورس: Twitter

  

راولپنڈی (ڈیلی پاکستان آن لائن) تھانہ نیوٹاؤن پولیس  نے  کارروائی کرتے ہوئے  بچوں کو اغواء کرکے بھیک منگوانے کے مکروہ دھندے میں ملوث تین  ملزمان گرفتار اور  ذہنی معذور بچہ بازیاب کرالیا۔

ترجمان راولپنڈی پولیس کے مطابق نیوٹاؤن کے علاقے نیوکٹاریاں سے ذہنی معذور بچہ اغواء ہوا، جس کے اغواء کا مقدمہ اس کے والد کی مدعیت میں تھانہ نیوٹاؤن میں درج کیا گیا تھا۔پولیس   ٹیم نے جدید ٹیکنالوجی اور ہیومن انٹیلی جنس کی مددسے ذہنی معذور بچے کو خوشاب سے برآمد کرکے محمد ارشد ،  اس کی اہلیہ فریدہ اور محمد صفدر کو گرفتار کرلیا۔ دوران تفتیش ملزمان نے ذہنی معذور بچہ اڑھائی لاکھ روپے میں خریدنے کا انکشاف کیا۔

پولیس حکام نے میڈیا کو بتایا کہ رواں برس اپریل میں 16 سالہ معذور بچے دارین عباس کو بھکاری مافیا نے اغوا کرکے پیروں میں کیلیں ٹھونک کر کان کی لو گرم چھری سے کاٹ دی، بچے کو نشہ آور انجکشن لگائے گئے اور اس کے دانت توڑ کر اسے گنجا کردیا گیا۔  بعد میں اسی حالت میں بچے کو سرگودھا میں بھکاریوں کے ٹھیکیدار کو ڈھائی لاکھ روپے میں فروخت کردیا۔

مزید :

جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -راولپنڈی -