اسلام آباد

اسلام آباد

اسلام آباد سے ملک الیاس

مری میں گزشتہ دنوں ہونیوالی برفباری کے بعد اسلام آباد اور جڑواں شہر بھی سرد ہواؤں کی لپیٹ میں آگئے ہیں،جہاں ایک طرف سردی کی شدت میں اضافہ ہوگیا ہے اور دن میں بھی ٹھنڈی ہوائیں چل رہی ہیں وہیں دوسری طرف سیاسی موسم میں اس وقت گرمی پیدا ہوگئی جب چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے اپنی رہائش گاہ پر منعقدہ پریس کانفرنس کے دوران توپوں کا رخ ایم کیو ایم کی طرف کردیا ،جس کے بعد دونوں سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں کی طرف سے ایک دوسرے کو ہاتھوں ہاتھ لیا گیا ،اس وقت وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کے سیاسی ،عوامی حلقوں میں جہاں ایک طرف تحریک انصاف اور ایم کیو ایم ایم کے درمیان ہونیوالی محاذ آرائی موضوع بحث بنی ہوئی ہے وہاں گزشتہ دنوں وزیراعظم محمد نوازشریف کی جانب سے بغیر پروٹوکول اچانک اسلام آباد کی قدیم مارکیٹ آبپارہ اور جی ٹین مرکز کا دورہ بھی موضوع گفتگو بنا ہوا ہے کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ میاں نوازشریف کا دورہ عوام میں اپنی ساکھ بہتر بنانے کیلئے ہے جب مخالف سیاسی جماعتوں کے کارکنوں کا کہنا ہے کہ اس طرح مسلم لیگ ن عوام میں اپنی مقبولیت میں اضافہ نہیں کرسکتی لیکن اس بات کا بھی سب اعتراف کررہے ہیں کہ ایک طویل عرصے کے بعد کسی سربراہ مملکت نے اسلام آباد کے عام علاقوں کا دورہ کیا کیونکہ جب سے ملک میں دہشتگردی کی فضا قائم ہے سخت سکیورٹی کے بغیر عام وزیر اور پارٹی رہنما بھی گھروں سے نہیں نکلتے ایسے میں وزیراعظم محمدنوازشریف کے دورہ آبپارہ مارکیٹ نے عوام کے ذہنوں پر اچھا تاثر چھوڑا ہے، عام لوگ وزیراعظم کو اپنے درمیان پاکر انتہائی خوش ہوئے اور ان سے اپنی وابستگی اور محبت کا اظہار کیا‘ وزیراعظم نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں حالیہ کمی کے عام اشیاء پر اثرات چیک کرنے کیلئے عوام اور دکانداروں سے اشیاء کی قیمتیں معلوم کیں‘ انہوں نے خورونوش اور ٹرانسپورٹ کرایوں میں واضح کمی محسوس نہ کرتے ہوئے انتظامیہ کو کمی کو یقینی بنانے کی ہدایات دیں ‘آبپارہ کے تاجروں نے وزیر اعظم کو اپنے مسائل سے آگاہ کیاجس پر وزیر اعظم نے فوری اقدامات کی ہدایت کی ‘ موقع کا فائدہ اٹھاتے ہوئے ‘وزیراعظم کو کئی شہریوں نے اپنے انفرادی مسائل بھی پیش کئے‘وزیراعظم جب جی ٹین مرکز پہنچے تو وہاں بھی لوگوں نے وزیراعظم کو اچانک اپنے درمیان پا کر خوشگوار حیرت کا اظہار کیا‘ وزیراعظم عوام میں گھل مل گئے‘وزیراعظم کا مختلف دکانوں پر پھلوں، سبزیوں اور کھانے پینے کی اشیاء کی قیمتوں سے متعلق شہریوں اور دکانداروں سے مکالمہ بھی ہوا ‘شہریوں نے ٹرانسپورٹ کرایوں میں نمایاں کمی نہ ہونے پر وزیراعظم سے شکایت کی‘اس دوران ’’وزیر اعظم زندہ باد‘‘کے نعرے ‘بھی لگتے رہے،جبکہ وزیراعظم نوازشریف نے عوام کے ساتھ مل کر پاکستان زندہ باد کے نعرے لگائے‘ دو سال میں گیس کی کمی کا مسئلہ ہمیشہ کے لئے حل کریں گے :وزیراعظم‘ اپنی مدت میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ ختم کردیں گے :وزیراعظم‘ عوام کو روزگار کی فراہمی یقینی بنائیں گے۔ اس دوران وزیر اعظم نے خصوصی طو رپر کئی خواتین کو روک کر ان کے مسائل بارے میں دریافت کئے،یہاں سیاسی مکالفین نے وزیراعظم کے دورہ کے دوران دکانداروں کی جانب سے بتائی گئی اشیاء کی قیمتوں کو جھوٹ قرار دیا انکا کہنا تھا کہ وزیراعظم کے سامنے انہوں نے اشیاء خوردونوش و دیگر چیزوں کے نرخ کم بتائے مگربعد میں وہ من مانے نرخوں پر ہی اشیاء بیچتے رہے ۔

اسلام آباد کے سیاسی موسم میں جہاں کچھ دنوں سے ٹھہراؤ آیا تھا اس وقت یکدم گرم ہوگیا جب چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے اپنی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس کے دوران ایم کیو ایم کو آڑے ہاتھوں لیا اورایک بار پھر الطاف حسین کوکڑی تنقید کانشانہ بنانے کے ساتھ ساتھ انہیں بزدل اور پاگل بھی قراردیا،انہوں نے الطاف حسین کی جانب سے پی ٹی آئی کی خواتین بارے استعمال کی گئی نازیبازبان کے استعمال پر ا لطاف حسین کیخلاف ہتک عزت کا دعویٰ دائر کرنیکا بھی اعلان کیا،ساتھ ساتھ انہوں نے ایم کیو ایم کے رہنماؤں کو مشورہ بھی دیا کہ وہ ایم کیو ایم کو الطاف حسین سے علیحدہ کرلیں،انہوں نے الطاف حسین کیخلاف برطانوی حکومت کو خط لکھنے کا بھی اعلان کیا،ساتھ ہی ساتھ یہ فیصلہ بھی سنادیا کہ تحریک انصاف ایسے کسی فورم پر نہیں بیٹھے گی جہاں ایم کیو ایم ہوگی،عمران خان کا کہنا تھا کہ کراچی میں اس وقت تک امن قائم نہیں ہوسکتا جب تک وہاں سے مسلح گروپوں کا خاتمہ نہیں ہوجاتا،عمران خان کے الزامات کے جواب میں قومی اسمبلی میں ایم کیو ایم کے پارلیمانی لیڈر رشید گوڈیل کاکہنا تھا کہ عمران خان پمپنگ لیڈر ہیں جو اسے کہہ دیتا ہے بول دیتا ہے‘ عمران خان طالبان کا پولیٹیکل ونگ ہے‘ دہشت گرد ان کے گھروں سے برآمد ہوئے ہیں‘ جتنے بھی پاکستان میں طالبان نے حملے کئے عمران خان نے ان کی مذمت نہیں کی‘ بارہ مئی اور سانحہ بلدیہ ٹاؤن کی عدالتی انکوائری کروائی جائے جو ملوث ہوا اسے سرعام لٹکایا جائے۔ اگر عمران خان ایم کیو ایم کو شکست دینا چاہتے ہیں تو پہلے عوام کے دل جیتنا ہوں گے۔ ہمارے قائد الطاف حسین نے لوگوں کے دل جیتے ہیں اور لوگ ان سے محبت کرتے ہیں، اگر ہم نے عمران خان کے کچے چٹھے کھول دئیے تو وہ منہ نہیں دکھاسکیں گے۔

اسلام آباد کے شہریوں کے لئے تشویش ناک بات یہ ہے کہ وفاقی دار الحکومت اسلام آباد کے سیوریج کے پانی میں پہلی بار پولیو وائرس کی کثیر تعداد پائی گئی، گزشتہ سال اسلام آباد کے سوا تمام بڑے شہروں کے سیوریج کے پانی میں پولیو وائرس کی تصدیق ہوئی تھی، لیکن گزشتہ ماہ کے آخری ہفتے میں اسلام آباد کے سیکٹر آئی الیون کے سیوریج کے پانی کے نمونے لئے گئے جن میں لیبارٹری رپورٹ کے مطابق کثیر تعداد میں پولیو وائرس پایا گیا ہے، وفاقی دارالحکومت کے سیوریج کے پانی میں پہلی بار پولیو وائرس پایا گیا ہے۔اسلام آباد جو پولیو فری شہر تھا کے سیوریج کے پانی میں پولیو وائرس پایا جانا عوام کے لئے انتہائی تشویشناک ہے وہیں وزار ت صحت کیلئے بھی کسی چیلنج سے کم نہیں ہے جس علاقے میں پولیو وائرس کی موجودگی کا بتایا جارہا ہے اس کے قریب افغان باشندوں کی کچی بستی ہے اور ان لوگوں کا صوبہ خیبر پختونخواہ اور افغانستان آنا جانا لگا رہتا ہے اس طرح خدشہ یہ ہے یہ وائرس افغانستان یا خیبرپختونخواہ کے علاقوں سے یہاں منتقل نہ ہوا ہو اس لیے ضرورت اس امرکی ہے کہ وزارت صحت اور متعلقہ ادارے اس علاقے کی خصوصی سکریننگ کریں اور رہائشیوں کے بھی ٹیسٹ لیے جائیں تاکہ پولیو وائرس کے پھیلنے سے پہلے ہی اس کا تدارک ممکن ہوسکے۔

وفاقی دارالحکومت، موسم سرد، عمران خان نے پریس کانفرنس کرکے گرم کر دیا

وزیراعظم محمد نوازشریف، آب پارہ اور جی 10کا اچانک دورہ، شہری حیران

وزیراعظم نے نرخ پوچھے، عوامی شکایات پر کارروائی کا حکم

عمران نے الزام لگائے تو متحدہ کی طرف سے جوابی الزامات لگائے گئے

اسلام آباد، سیوریج میں پولیو وائرس کا انکشاف!

مزید : ایڈیشن 1