اہلسنت والجماعت کے ساتھ امتیازی برتاؤتشویش ناک ہے، محمد احمد لدھیانوی

اہلسنت والجماعت کے ساتھ امتیازی برتاؤتشویش ناک ہے، محمد احمد لدھیانوی

 لاہور( نمائندہ خصوصی) اہلسنت والجماعت کے سربراہ علامہ محمد احمد لدھیانوی نے کہاکہ دہشت گردی کے خاتمہ کے لیے پوری قوم میں اتفاق ہے،اہلسنت والجماعت کے ساتھ امتیازی برتاؤتشویش ناک ہے،پرامن کارکنوں اور ذمہ داران کو گھروں سے گرفتار کرکے دہشت گردی کے مقدمات ڈالے جارہے ہیں،اہلسنت والجماعت کا ایک بھی کارکن ریاست یا اداروں کے خلاف یا کسی بھی قسم کی دہشت گردی میں ملوث ہوا تو خود سزا کے لیے پیش کریں گے،کچھ عناصر موقع سے فائدہ اٹھا کر دینی قوتوں اورفوج کے درمیان ٹکراؤ کرانا چاہتے ہیں،اہلسنت والجماعت ریاست کو ماں کا درجہ دیتی ہے،ریاست کے خلاف کسی بھی اقدام کے بارے میں سوچا بھی نہیں جاسکتا،اس وقت تک اہلسنت والجماعت 7ہزار کارکنان کے جنازے اٹھاچکی ہے،ایک ایک دن میں کئی کئی جنازے اٹھانے کے باوجود ہمیشہ امن کا درس دیا ہے،علامہ احمد لدھیانوی نے کہاکہ پنجاب میں دہشت گردی کی آڑ میں اہلسنت والجماعت کے کارکنان کو بے جا ہراساں کیاجارہاہے،ملک میں دہشت گردی جس حد تک سرایت کرچکی ہے اس کے لیے اوچھے ہتھکنڈوں کا استعمال اضافے کے باعث بن سکتا ہے،اہلسنت والجماعت کے ذمہ داران کو گھروں سے گرفتار کرکے ان پر دہشت گردی کے مقدمات ڈال کر جیل بھیجا جارہاہے، اہلسنت والجماعت دہشت گردی کے خاتمہ چاہتی ہے لیکن اس طرح کا امتیازی سلوک برداشت نہیں کیا جائے گا،اہلسنت والجماعت کے ساتھ زیادتی کا اعلیٰ حکام نوٹس لیں۔

مزید : علاقائی