چنیوٹ میں اعلٰی معیار کے لوہے کی تصدیق قومی معیشت کو استحکام ملے گا ،شہباز شریف

چنیوٹ میں اعلٰی معیار کے لوہے کی تصدیق قومی معیشت کو استحکام ملے گا ،شہباز ...

 لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف سے یہاں چنیوٹ ۔رجوعہ میں معدنی وسائل کے منصوبے پر کام کرنے والی چینی کمپنی میٹالرجیکل کارپوریشن آف چائنہ کے وفدنے ملاقات کی،جس میں چنیوٹ۔رجوعہ میں معدنی وسائل کی تلاش و تصدیق کے منصوبے میں ہونے والی پیش رفت پر تبادلہ خیال ہوا۔وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے چنیوٹ ۔رجوعہ میں معدنی وسائل کے منصوبے پر اب تک ہونے والی پیش رفت پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ چنیوٹ۔ رجوعہ میں معدنی وسائل کی تلاش کا منصوبہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے اوریہ منصوبہ پاکستان خصوصاً پنجاب کی معیشت کیلئے ایک انقلابی حیثیت رکھتا ہے جس کی تکمیل سے قومی معیشت کو استحکام ملے گا ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان قدرتی وسائل کی دولت سے مالا مال ہے جنہیں بروئے کار لاکر نا صرف قومی معیشت کو مضبوط کیا جاسکتا ہے بلکہ ترقی وخوشحالی کی منزل بھی حاصل کی جاسکتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ زمین کی تہہ میں چھپی معدنی دولت ہماری آئندہ نسلوں کے مستقبل کو تابناک بنا سکتی ہے ۔ زمین میں چھپے یہ خزانے پاکستان کیلئے تیل اور گیس سے کم نہیں۔ یہی وجہ ہے کہ پنجاب حکومت نے اس منصوبے کی اہمیت کو مدنظر رکھتے ہوئے انتہائی تیزرفتاری کے ساتھ کام کو آگے بڑھایا ہے ۔وزیراعظم محمد نواز شریف کی قیادت میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کی حکومت قدرتی وسائل کو بروئے کار لانے کیلئے ہر ممکن اقدامات اور کاوشیں کررہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ چنیوٹ ۔رجوعہ میں خام لوہے کے وسیع ذخائر موجود ہیں۔منصوبے پر اب تک ہونے والی پیش رفت انتہائی اطمینان بخش ہے۔انہوں نے کہا کہ چنیوٹ۔ رجوعہ میں خام لوہے کے نمونوں کی تصدیق بین الاقوامی لیبارٹریوں سے کرائی گئی ہے۔دریافت ہونے والے ذخائر کے نمونوں میں 65 فیصد تک اعلیٰ کوالٹی کے لوہے کی تصدیق ہوئی ہے جو پوری قوم کیلئے ایک خوشخبری ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سابق دور آمریت کے دوران پنجاب کے حکمرانوں نے ذاتی لالچ اورملکی مفادات کو یکسر نظر اندازکرتے ہوئے اس منصوبے کے ساتھ گھناؤنا کھیل کھیلااورزمین کی تہہ میں موجود خزانوں سے استفادہ کرنے کیلئے کوئی کاوش نہیں کی گئی بلکہ اس ضمن میں مجرمانہ غفلت برتی گئی لیکن پاکستان مسلم لیگ(ن) کی حکومت نے اس منصوبے کی اہمیت کے پیش نظرشفاف طریقے سے بین الاقوامی کنسلٹنٹ کی خدمات حاصل کیں اورچینی کمپنی کے ساتھ معاہدہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے معدنی دولت کو استعمال میں لانے کیلئے ٹھوس حکمت عملی اپنائی ہے ۔چنیوٹ ۔رجوعہ میں خام لوہے کے ساتھ تانبااور دیگر قیمتی معدنی وسائل بھی دریافت ہو سکتے ہیں اور اس ضمن میں ابتدائی نتائج انتہائی حوصلہ افزاء ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان خصوصاً پنجاب کی معیشت کیلئے چنیوٹ ۔رجوعہ میں معدنی وسائل کی تلاش کا منصوبہ انقلابی حیثیت رکھتا ہے اورانشاء اللہ زمین میں چھپے یہ خزانے ملک وقوم کی ترقی کے ضامن ثابت ہوں گے۔اس موقع پر وزیراعلیٰ کو چنیوٹ ۔رجوعہ سے ملنے والے خام لوہے اور تانبے کے نمونے بھی دکھائے گئے۔جرمن ماہر ڈاکٹر جرگن ہرٹیش نے منصوبے پر ہونے والی پیش رفت کے حوالے سے بریفنگ دی اورحاصل ہونے والے معدنی وسائل خصوصاً خام لوہے اورتانبے کے نمونوں کو انتہائی حوصلہ افزاء قرار دیا اورکہا کہ یہ اس منصوبے کے حوالے سے ایک اہم پیش رفت ہے۔صوبائی وزیر معدنیات شیر علی خان، سیکرٹری معدنیات، سیکرٹری اطلاعات، پراجیکٹ مینجر پنجاب منرل ڈویلپمنٹ کمپنی کے علاوہ میٹالرجیکل کارپوریشن آف چائنہ کے چیف اکنانومسٹ زینگ منگ ژنگ، چیئرمین ایم سی سی مائننگ لمیٹڈ زو جیان ہوائی اور دیگر عہدیدار بھی اس موقع پر موجود تھے۔ وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف سے یہاں چین کی معروف توانائی کمپنی سائینو ہائیڈرو کے وفد نے ملاقات کی۔اس موقع پر چینی کمپنی نے پنجاب میں ایل این جی سے بجلی کا منصوبہ لگانے میں دلچسپی کا اظہارکیا۔وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو درپیش توانائی بحران سے نمٹنے کیلئے تیز رفتاری سے اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ حکومت نے گیس ،کوئلے، سولراور دیگر ذرائع سے توانائی کے حصول کیلئے حکمت عملی اپنائی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت سستے ذرائع سے توانائی کے حصول کیلئے کوشاں ہے۔ چینی کمپنی کی جانب سے ایل این جی سے پاور پلانٹ لگانے میں دلچسپی کا خیرمقدم کریں گے۔ معاون خصوصی عزم الحق، ایڈیشنل چیف سیکرٹری اور متعلقہ حکام بھی اس موقع پر موجود تھے۔ وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ دہشت گردی اور انتہاپسندی کا خاتمہ پوری قوم کی آواز ہے۔ قوم سانحہ پشاور کا زخم ابھی نہیں بھولی۔ دہشت گردی، انتہاپسندی اور فرقہ واریت ترقی و خوشحالی کی راہ میں رکاوٹ ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کیلئے سخت فیصلے کئے گئے ہیں۔ پنجاب میں بعض قوانین میں ضروری ترامیم کرکے سزاؤں کو سخت کیا گیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ ملک کی ترقی اور امن کے دشمنوں کے خلاف فیصلہ کن جنگ لڑی جا رہی ہے۔ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں فتح پاکستانی عوام کی ہوگی۔ وہ مسلم لیگ (ن) کے عہدیداران سے گفتگو کر رہے تھے۔ وزیر اعلی پنجاب محمد شہبار شریف سے اسلام آباد میں وفاقی وزیر اوورسیز پاکستانیز و ہیومین ریسورس ڈیویلپمنٹ پیر صدرالدین راشد ی نے ملاقات کی ۔ ملاقات میں اوورسیز پاکستانیوں کی فلاح و بہبوداو ران کے اہلخانہ کے لئے شروع کئے گئے مختلف فلاحی منصوبوں کے بارے بات چیت ہوئی۔ وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات پرویز رشید ، وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق ، اسماعیل راہو، پاکستان مسلم لیگ (ن)کراچی کے رہنما سلیم ضیا بھی موجود تھے۔ وزیر اعلی پنجاب محمد شہبازشریف نے اس موقع پر گفتگوکے دوران دیار غیر میں محنت کر کے وطن عزیز کے لئے قیمتی زرمبادلہ کے حصول کا باعث بننے والے پاکستانیوں کی خدمات کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہاکہ ان کی شبانہ روز محنت سے قومی معیشت کی ترقی میں مدد مل رہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ پنجاب میں اوورسیز پاکستانیز کے مسائل کے حل کے لئے اوورسیز پاکستانیز کمیشن قائم کیا گیاہے اس کے کمشنر کی تعیناتی بھی عمل میں لائی گئی ہے۔یہ کمیشن اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل کے حل کے لئے اقدامات کرے گا۔ سمندر پار پاکستانیوں اور افرادی قوت کی ترقی کے وفاقی وزیر نے ملاقات کے دوران اورسیز پاکستانیوں کے لئے شروع کی گئی سکیموں کے بارے میں تفصیلات سے آگا ہ کیا۔ ملاقات کے دوران قومی ترقی کے دیگر جاری منصوبوں کے بارے میں بھی بات چیت کی گئی۔ وزیر اعلی پنجاب محمد شہباز شریف سے اسلام آبادمیں پاکستان میں ڈنمارک کے سفیر جسپر مولر سورنسن(Gesper Moller Sorenson) نے ملاقات کی۔ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور اور دو طرفہ تعاون کو فروغ دینے پر تبادلہ خیال ہوا۔ وزیر اعلی نے اس موقع پنجاب میں جاری میگا پراجیکٹس اور عوامی بہبود کے منصوبوں کے بارے میں بتایا۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان اور ڈنمارک میں مختلف سطح پر تجارتی تعاون کو فروغ دینے کے روشن امکانات ہیں جن سے فائد ہ اٹھانے تجارتی وفود کے دورے سود مند ثابت ہو سکتے ہیں۔ انہوں نے پاکستان بالخصوص پنجاب میں مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری کے مواقع کے بارے میں بتایا۔ ڈنمارک کے سفیر نے پاکستان میں وزیر اعظم محمد نواز شریف کی قیادت میں اقتصادی ترقی اور اصلاحات کے پروگرام کی تعریف کی۔

مزید : صفحہ اول