معاشی بہتری کیلئے اسلامک بینکاری نظام رائج کیا جائے: شیخ عبدالرؤف

معاشی بہتری کیلئے اسلامک بینکاری نظام رائج کیا جائے: شیخ عبدالرؤف

لاہور(کامرس رپورٹر) گوجرانوالہ چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے نائب صدر شیخ عبدالرؤف نے اسلامک بینکاری کے فروغ کی کاوشوں کو سہراتے ہوئے کہا کہ ملکی معیشت کو بہتر کرنے کیلئے اسلامک بینکاری نظام کا رائج ہونا وقت کی اشد ضرورت ہے ۔پاکستان ایک اسلامی ملک ہے اور ہمیں اپنے بینکاری نظام اور معیشت کو مکمل طور پر اسلامی طریقے پر ترتیب دینا ہو گا تاکہ اسلامک اکنامک سسٹم کی حقانیت کو پوری دنیا کے سامنے ایک مثال کے طور پر پیش کیا جا سکے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سٹیٹ بنک آف پاکستان کے تعاون سے منعقد ہ اسلامک بینکاری سیمینار سے خطاب کے دوران کیا ۔ اس موقع پر اراکین مجلس عاملہ سابق صدر اخلاق احمد بٹ ، انصر افتخاربٹ چیف مینجرSBP، مفتی نجیب احمد خان شرعی ایڈوائزر ، محمد اسلام احمد سینئر جائنٹ ڈائریکٹرSBP ، احسن علی پروڈکٹ ڈویلپمنٹ مینجر یوبی ایل امین لاہور کے علاوہ بزنس کمیونٹی اور طلباء و طالبات کی کثیر تعداد بھی موجود تھی۔اس موقع پر مفتی نجیب احمد خان شرعی ایڈوائزر نے کہا کہ بلاشبہ اسلامک بینکاری کمرشل بینکاری سے یقیناًمختلف ہے۔ جس کا مقصد سودی نظام کی خرابیوں سے عوام کو بچانا ہے ۔

انہوں نے اراکین کو بتایا کہ مرکزی بنک اس حوالے سے مکمل طو رپر اپنا کردار ادا کر رہا ہے اور جید علماء کا شرعی ایڈوائزری بورڈ قائم ہے جو تمام اسلامی بینکو ں میں قرآن و سنت کی روشنی میں اسلامک بینکنگ سسٹم کو ترتیب دیکر مکمل طو رپر شریعت کے احکامات کے مطابق بینکوں کا نظام چلارہا ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی بینکنگ نظام شریعت کے اصولوں کے مطابق کام کر رہا ہے جس کے ذریعے عام آدمی سمیت کاروباری افراد بھی استفادہ حاصل کر سکتے ہیں۔

مزید : کامرس