کراچی میں یو بی ایل ادبی ایکسیلنسایوارڈ کا انعقاد

کراچی میں یو بی ایل ادبی ایکسیلنسایوارڈ کا انعقاد

کراچی ( پ ر) پانچویں یو بی ایل ادبی ایکسیلنس ایوراڈ 2015 کی تقریب کراچی میں ہوئی۔ تقریب کا انعقاد کراچی لٹریچر فیسٹیول کیساتھ مل کر کیا گیا۔ پاکستانی ادیبوں کی ادبی کوششوں کا یہ (بقیہ نمبر25صفحہ7پر )

جشن ، یو بی ایل ایکسیلنس ایوارڈ کے تحت مسلسل پانچویں سال منعقد کیا گیا۔ ایوارڈز کے لئے 123 سے زیادہ انٹر یز نامزدگی کے طور پر موصول ہوئیں۔ جو 7 کیٹیگریز پر محیط تھیں ۔ یہ کتابیں پاکستانی مصطین نے لکھی تھیں اور گزشتہ سال پاکستان میں شائع ہوئی تھیں جیتنے والی کتابوں کو ججوں کے ایک قابل احترام پینل نے منتخب کیا جس میں انتظار حسین ( مرحوم) ڈاکٹر اصغر ندیم سیدّ، ڈاکٹر آصف فرخی، جناب غازی صلاح الدین ، ڈاکٹر عارفہ سیدّہ ، محترمہ کشورناہید ، ڈاکٹر انوار احمد اور ڈاکٹر فرامجی مینوالا شامل تھے۔ ہر کیٹیگری سے جیتنے والے مصنف اور ان کی کتابوں میں اردو فکشن ( افسانہ) محمد عاصم بٹ کی تحریر ’’ ناتمام‘‘ اردو فکشن کیلئے اسلم فرخی کی تحریر ’’ بزم رونق جہان‘‘ اردو شاعری میں امداد حسینی کی کاوش ’’ دھوپ کنارے‘‘ بچوں کے اردو ادب میں نجمہ پروین کی تحریر ’’ سنہری کہانیاں‘‘ اور اختر عباس کی تحریر ’’ ڈریگن کی واپسی‘‘ جبکہ انگریزی نان فکشن میں خضر ہمایوں انصاری کی تحریر The Emergence of Socialist Thought Among North Indian Muslims بچوں کا انگریزی ادب ، حمیدہ کھوڑو کی تحریر A Children's History Of Balochistan شامل ہیں۔ یو بی ایل کے صدر اور سی ای او وجاہب حسین نے اپنے خطاب میں کہا کہ یوبی ایل کا ادب سے ایک گہرا رشتہ ہے ، بینک پاکستان کی ادبی سرگرمیوں کے فروغ میں فعال کردار ادا کرتا ہے اور اسے یقین ہے کہ ان ایوارڈز کے ذریعے پاکستان کی آئندہ نسلوں کی حوصلہ افزائی ادب میں گہری دلچسپی پیدا ہوگی۔ اس طرح ملک میں شاعری اور نثری ادب کو فروغ حاصل ہوگا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر