آذربائیجان کے 20رکنی تجارتی وفدکی لاہورمیں تاجروں وصنعتکاروں سے ملاقات

آذربائیجان کے 20رکنی تجارتی وفدکی لاہورمیں تاجروں وصنعتکاروں سے ملاقات

لاہور(کامرس رپورٹر)آذربائیجان کے 20رکنی تجارتی وفد نے ایف پی سی سی آئی میں ریجنل چےئرمین منظور الحق ملک کی قیادت میں پاکستانی صنعت کاروں اور تاجروں سے ملاقات کی اور شعبہ کی مناسبت سے بزنس ٹو بزنس میٹنگ بھی کی گئی۔ ایف پی سی سی آئی کی طرف سے آزربائیجان کے صنعت کاروں اور تاجروں کو پاکستان میں سی پیک منصوبے میں چین کی سرمایہ کاری ، دونوں مالک کے درمیان تجارت حجم اور ملک میں موجود تجارتی سر گرمیوں کے بارے میں بریفنگ دی گئی ۔منظورالحق ملک نے کہا کہ کاروباری برادری کے وفود کے تبادلے اقتصادی سرگرمیوں میں اضافہ میں موثر کردار ادا کرتے ہیں۔

ہم مختلف بین لاقوامی چیمبرز کے ساتھ الحاق شدہ ہیں۔مشترکہ چیمبرآف کامرس اور صنعت کی باہمی تجارتی ،سرمایہ کاری اور خدمات ہم منصب چیمبر کے ذریعے ہی کی جاتی ہے۔ ایف پی سی سی آئی کے کا م اور اس کا کردار بین لاقوامی سطح پر ان رابطوں کومضبوط کرنا ہے۔آزربائیجان کے پاکستان میں سفیر علی علی زادہ نے کہاکہ وفود کے پاکستان میں دورے کا مقصدپاکستان اور آزربائیجان وفود کی کے تبادلے کو برقرار رکھنے اور باہمی تجارت کے فروغ ،برآمدات کا تبادلہ اور سرمایہ کاری کی بنیادکوترجیح دینا ہے۔ وفد کا مقصد زیادہ سے زیادہ برآمدات اور تجارتی حجم کو بڑھانا ہے۔ آزربائیجان ایکسپورٹ اینڈ انویسٹمنٹ پروموشن فانڈیشن کے نائب صدر یوسف عبدا للہ نے کہا کہ باہمی تجارت کے فروغ کیلے وفود کے تسلسل کو برقرار رکھیں گے۔ اجلاس کے تمام شرکاء نے اپنے اپنے شعبہ جات کے مطابق اپنی اپنی رائے کا اظہار کیا۔ برآمدات سے متعلق چار شعبہ جات جس میں(سبزیوں اور پھل، شوگر،فارماسیوٹکل صنعت اور کیمیکل سیکٹر )کو زیر بحث لایا گیا۔پاکستان اور آزربائیجان کے صنعت کاروں اور تاجروں کے درمیان برنس ٹو بزنس سیشن کا بھی انعقاد کیا گیا جس میں دونوں فریقین نے اپنے اپنے سیکٹر کے حوالے سے امپورٹ اینڈ ایکسپورٹ کی تجارتی سرگرمیوں کو بڑھانے کے لیے اپنی اپنی کمپنیوں کے پروفائلزکا تبادلہ کیا اور بینکنگ ٹرنزکیشن اور دیگر در پیش مسائل کو بھی زیر بحث لایا گیا۔ پاکستانی تاجروں میں سے طارق مغل،خواجہ خاور رشید،محمد وسیم وہرہ،ظفر اقبال،چوہدری تنویر ڈیلوں،عرفان احمد،سید سیلمان علی،عثمان اکرم،سید حسن رضا اور دیگر نے شرکت کی۔

مزید : کامرس