پاکستان کمپیوٹرایسوسی ایشن کے سات رکنی وفدکی صدرلاہورچیمبرسے ملاقات

پاکستان کمپیوٹرایسوسی ایشن کے سات رکنی وفدکی صدرلاہورچیمبرسے ملاقات

لاہور(کامرس رپورٹر) پاکستان کمپیوٹرایسوسی ایشن کے سات رکنی وفد نے لاہور چیمبر کے قائم مقام صدر محمد ناصر حمید خان کے ساتھ ملاقات میں انہیں بجٹ تجاویز پیش کردی ہیں۔ وفد کی سربراہی ایسوسی ایشن کے صدر بشارت احمد کررہے تھے۔ لاہور چیمبر کے قائم مقام صدر نے وفد کو ہر ممکن تعاون کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ انہیں درپیش مسائل حل کرانے کے لیے ہر ممکن کوششیں کی اور اْن کی تجاویز کو لاہور چیمبر کی بجٹ تجاویز کا حصہ بنایا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں دولاکھ کے لگ بھگ سکولوں میں کمپیوٹرز موجود نہیں جبکہ 2.5ملین کے لگ بھگ چھوٹے کاروبار ابھی بھی انفارمیشن ٹیکنالوجی کے بغیر کام کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انفارمیشن ٹیکنالوجی کے بغیر کوئی بھی کاروبار ترقی نہیں کرسکتا لہذا حکومت پاکستان کمپیوٹرایسوسی ایشن کے مسائل جلد حل کرے۔بشارت احمد نے آگاہ کیا کہ کمپیوٹر میں استعمال ہونے والے پارٹس پر سترہ فیصد سیلز ٹیکس عائد ہے جو ختم ہونا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ انفارمیشن ٹیکنالوجی کو فروغ دینے کے لیے حکومت موجودہ ٹیکس پالیسی میں ترمیم کرے جس سے خود اْس کے محاصل بھی بڑھیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اگر حکومت پاکستان کمپیوٹر ایسوسی ایشن کی بجٹ تجاویز قبول کرلے تو اس سے نہ صرف اس شعبے کو فائدہ ہوگا بلکہ روزگار کے نئے مواقع پیدا ہونگے، صنعتوں میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کے استعمال کو فروغ حاصل ہوگا اور معاشی ترقی میں بھی مدد ملے گی۔

مزید : کامرس