پاکستان کو جاپان کیساتھ تعلقات پر فخر ہے، رفیق رجوانہ

پاکستان کو جاپان کیساتھ تعلقات پر فخر ہے، رفیق رجوانہ

لاہور(نمائندہ خصوصی) گورنر پنجاب ملک محمد رفیق رجوانہ نے کہا کہ سیاسی استحکام کے بعد پاکستان معاشی استحکام کی منزل کی طرف تیزی سے گامزن ہے اور گزشتہ چند برسوں کے دوران معیشت میں ہونیوالی بہتری اس بات کا واضح ثبوت ہے۔انہوں نے کہا کہ دور حاضر میں کوئی بھی ملک تن تنہا آگے نہیں بڑھ سکتا جس کے لیے دوست ملکوں سے باہمی تعاون ناگزیر ہے یہی وجہ ہے کہ حکومت اپنے دوست ملکوں کے ساتھ مشترکہ تعاون کو نئی وسعتوں تک پھیلا رہی ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جاپان کے سفیرمسٹر تا کاشی کیورائی اور آزربائیجان کے سفیرمسٹر علی علیزادہ سے گفتگو کے دوران کیاجنہوں نے گورنر ہاؤس لاہور میں ان سے علیحدہ علیحدہ ملاقات کی۔جاپانی سفیر سے گفتگو کرتے ہوئے گورنر پنجاب نے کہا کہ پاکستان کو جاپان کے ساتھ اپنے دو طرفہ تعلقات پر فخر ہے خصوصا معاشی شعبے میں دو طرفہ تعاون میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ برس جاپانی سرمایہ کاروں نے پاکستان میں 70ملین ڈالر سے زائد کی سرمایہ کی ہے جس میں مزید اضافہ متوقع ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اور جاپان کے درمیان تجارت کا حجم تقریبا دو ارب ڈالر ہے جس میں اضافے کے بے پناہ مواقع موجود ہیں۔آزربائیجان کے سفیر مسٹر علی علیزادہ سے گفتگو کرتے ہوئے گورنر پنجاب نے کہا کہ پاکستان میں امن و امان کی صورتحال بہتر ہونے کے بعد غیر ملکی سرمایہ کاروں اور تاجروں کے اعتماد میں اضافہ ہوا ہے اور وہ یہاں سرمایہ کاری کو ترجیح دے رہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ سی پیک منصوبہ بلاشبہ خطے میں ایک گیم چینجر ثابت ہو گا جس سے نہ صرف پاکستان بلکہ دیگر ممالک کو بھی فائدہ ہوگا۔آزربائیجان کے سفیر نے کہا کہ انہوں نے پاکستان کو ہمیشہ اپنا گھر سمجھا ہے اور دونوں ملکوں کے عوام کے دل ایک دوسرے کے ساتھ دھڑکتے ہیں ۔

رفیق رجوانہ

مزید : صفحہ آخر