سینیٹر راحیلہ مگسی کے کم سن پوتے کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم

سینیٹر راحیلہ مگسی کے کم سن پوتے کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے پاکستان مسلم لیگ (ن )کی سینیٹر راحیلہ مگسی کے 2 سالہ پوتے کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم دیتے ہوئے بچے کی والدہ کو 10لاکھ روپے کے ضمانتی مچلکے داخل کروانے کی ہدایت کر دی ۔جسٹس جواد حسن نے یہ حکم لیگی سینیٹر کے بیٹے محمد محسن کی جانب سے دائر درخواست پر سنایا ہے ۔ درخواست گزار نے موقف اختیار کررکھا ہے کہ اس کا اپنی اہلیہ خدیجہ امجد کے ساتھ 2سالہ بیٹے مصطفی محسن کی حوالگی کا تنازع چل رہا ہے اور اس حوالے سے معاملہ فیملی عدالت میں زیر التواء ہے۔ درخواست گزار نے خدشہ ظاہر کیا کہ بچے کی والدہ اسے لے کر بیرون ملک فرار ہو جائے گی ۔فیملی عدالت کے فیصلے تک شیرخوار کا نام ای سی ایل میں شامل کیا جائے۔ بچے کی والدہ خدیجہ امجد کی طرف سے کلیم الیاس ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ ہائیکورٹ کو کسی کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا اختیار نہیں ہے جبکہ ذاتی تنازع پر کسی کا نام ای سی ایل میں نہیں ڈالا جا سکتا۔

مزید : صفحہ آخر