ایف بی آر وزیراعظم کو بچانے کیلئے دستاویز ات بنا رہا ہے ، عمران خان

ایف بی آر وزیراعظم کو بچانے کیلئے دستاویز ات بنا رہا ہے ، عمران خان

اسلام آباد(آئی این پی)پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے الزام عائدکیا ہے کہ فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) وزیراعظم کو بچانے کیلئے دستاویز بنا رہا ہے ، پانامہ کیس میں تکنیکی انصاف نہیں ہوسکتا ،جیل میں قید سارے قیدیوں کے جرائم ایک طرف اور نوازشریف کا کھانچا ایک طرف ،نوازشریف ہمیشہ بچتے رہے ہیں وہ اب پہلی بار اتنی بری طرح پھنسے ہیں ،زبیر عمر کو اس لئے گورنر بنا دیا گیا کیونکہ وہ ان کیلئے جھوٹ بولتا تھا،ایل این جی منصوبہ بھی ایک سکینڈل ہے ،حکمرانوں نے خود تسلیم کیا کہ قطری خاندان 25سال سے ان کا بزنس پارٹنر ہے ،حکمرانوں نے جس طرح اقتدار کا فائدہ اٹھایا کسی نے نہیں اٹھایا ۔وہ جمعہ کو نجی ٹی وی کو انٹرویو دے رہے تھے ۔انہوں نے کہا کہ ایک طاقتور کو ادارے جیل میں ڈالنے کی بجائے اسے بچا رہے ہیں ،پانامہ کیس کا فیصلہ جو بھی آیا پاکستان جیتے گا ۔عمران خان نے کہا کہ جیل میں سے قید سارے قیدیوں کے جرائم ایک طرف اور نوازشریف کا کھانچا ایک طرف، پانامہ کا انکشاف نہ ہوتا تو یہ مانتے ہی نہ کہ لندن فلیٹس ان کے ہیں ، پاکستان کا مستقبل اب بدل رہا ہے اور شریفوں نے بھی یہ مان لیا ہے کہ قطری خاندان ان کا 25سال سے بزنس پارٹنر ہے ،پانامہ کیس میں نوازشریف قوم کے سامنے بے نقاب ہوئے ہیں اس کیس میں تکنیکی انصاف نہیں ہوسکتا ،قطری کے علاوہ انکے پاس کو منی ٹریل نہیں ہے ۔چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ وزیراعظم خود کو بچانے کیلئے سب کو بچا رہے ہیں اورایف بی آر وزیراعظم کو بچانے کیلئے دستاویز بنا رہا ہے ،سابق صدر فاروق لغاری20سال پہلے ہی یہ کہتے تھے کہ شریف خاندان کے پاس ڈیڑھ ارب ڈالر سے زائد کے اثاثے ہیں ، حکمرانوں نے بڑے منصوبوں کے ذریعے بڑی کرپشن کی ،یہ لوگ تمام منصوبوں میں پیسہ بنانے کے ماہر ہو گئے ہیں ،کسی نے اتنی تیزی سے پیسہ نہیں بنایا جتنا انہوں نے بنایا ۔انہوں نے کہا کہ حکمرانوں نے 6ارب کے قرضے واپس کرنے تھے پھر بھی الیکشن لڑ لیا ،عام آدمی 20لاکھ کا نادہندہ ہوتو الیکشن نہیں لڑ سکتا ،حکمرانوں نے جس طرح اقتدار کا فائدہ اٹھایا اس طرح کوئی نہیں اٹھا سکتا ،ہم شہباز شریف کے خلاف الیکشن کمیشن میں ریفرنس دائر کر رہے ہیں اس نے خود کو خود ہی شوگر ملز لگانے کی اجازت دے دی ،زبیر عمر کو اس لئے گورنر بنا دیا گیا کیونکہ وہ ان کیلئے جھوٹ بولتا تھا۔عمران خان نے کہا کہ حکمرانوں کی کرپشن کی قیمت عوام ادا کرتے ہیں ،ایل این جی منصوبہ ایک سکینڈل ہے کیونکہ قطری خاندان کو ایل این جی کا کنٹریکٹ دینے کا مطلب خود کو ہی کنٹریکٹ دینا ہے اور عوام ایل این جی کی بھاری قیمت ادا کریں گے ،عوامی منصوبوں کی صحیح تفصیلات عوام کوہی نہیں بتائی جاتی بلکہ خفیہ رکھی جاتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کا مستقبل بدل رہا ہے ، ملک وہ بننے جا رہا ہے جو ہم دیکھنا چاہتے ہیں ، جو چیزیں سپریم کورٹ میں سامنے آ گئی ہیں ان سے عوام میں شعور پیدا ہوا ہے ،نوازشریف سمجھتے تھے جیسا ہمیشہ ہوتا رہا ہے اب بھی ویسا ہی چلے گا ،ملک میں کبھی بھی اس طرح چیف ایگزیکٹو کی تلاشی نہیں لی گئی ،دونون بڑی سیاسی جماعتیں اپنے فائدے کیلئے ایک دوسرے کو کرپٹ کہتی ہیں مگر اب ان کی نہیں چلے گی ۔

عمران خان

مزید : صفحہ اول