مدینہ کی ریاست میں حج عمرہ مفت نہیں ہوتا ،وزیر مذہبی امور

مدینہ کی ریاست میں حج عمرہ مفت نہیں ہوتا ،وزیر مذہبی امور

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی وزیر مذہبی امور نورالحق قادری کا کہنا ہے کہ سعودی وزارت حج کی خواہش ہے کہ تمام ممالک حج تین سے چار سال میں بتدریج نجی شعبے کو منتقل کریں، آئندہ چند برس میں حج مزید مہنگا اور نجی شعبے کے تحت ہی ممکن ہوسکے گا۔جیو نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے نورالحق قادری نے کہا کہ سعودی حکام چاہتے ہیں کہ حج مکمل نجی شعبے کے حوالے کیا جائے اور وہ مرحلہ وار حج نجی شعبے میں منتقل کرنے کا کہہ رہے ہیں، ان کی حج پرائیویٹائز کرنے کی بات ماننا پڑے گی۔وزیر مذہبی امور نے کہا کہ مدینہ کی ریاست میں حج عمرہ مفت نہیں ہوتا، حج اخراجات میں اب کوئی تبدیلی نہیں ہوگی۔انہوں نے بتایا کہ حج سبسڈی کی سمری وفاقی کابینہ میں پیش کی گئی اور اس کے حق میں دلائل بھی دیے تھے تاہم کابینہ نے حج سبسڈی پر اتفاق نہیں کیا۔ وفاقی وزیر مذہبی امور نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے کہا بدحال معیشت میں سبسڈی دینے پر ان کا دل نہیں مانتا، مسلم لیگ (ن) نے الیکشن کی وجہ سے سبسڈی دی تھی۔نورالحق قادری کا کہنا تھا کہ اسلامی نظریاتی کونسل نے سبسڈی کو جائز قرار دیا تھا اور انہوں نے مرحلہ وار سبسڈی ختم کرنے کی تجویز دی تھی۔انہوں نے کہا کہ سعودی حکومت نے دنیا بھر کے لیے حج اخراجات میں اضافہ کیا اور اْسے اخراجات میں کمی کا نہیں کہیں گے، سعودی ولی عہد سے بھی اخراجات میں کمی کا مطالبہ نہیں کریں گے۔

وزیر مذہبی امور

پشاور(آن لائن) ریاستی اداروں کے خلاف ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت ہرزہ سرائی کی جار ہی ہے جو ملک و ملت کے لیے انتہائی خطر ناک ہے ۔ ہمارے اکابرین نے پاکستان کی خصول کے لیے تحریک پاکستان میں ہر قسم مالی و جانی قربانی پیش کی ہے ۔ ہم بھی مادروطن کے دفاع کے لیے اپنا سب کچھ قربان کرینگے اور ہم اپنے ریاستی اداروں کے ساتھ کھڑے ہیں ۔ ان خیالات کا اظہار وفاقی وزیر مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی ڈاکٹر پیر محمد نور الحق قادری نے جامعہ امانیہ گجر آباد ہزار خوانی پشاور میں شباب اہلسنت کے زیر اہتمام حضرت پیر شیخ گل صاحب مبارک ؒ کی یاد میں منعقدہ "شیخ المشائخ کانفرنس"میں بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ تقریب کی صدارت روحانی پیشوا حضرت پیر شمس الامین قادری پیر آف مانکی شریف نے کی۔ جبکہ روحانی رہنما حضرت پیر رحمت کریم قادری چشتی ، حضرت پیر فخر عالم جان ، حضرت علامہ مفتی نظام الدین سرکانی ، حضرت صاحبزادہ علامہ جنید امین قادری ، حضرت علامہ صاحبزادہ فضل منان قادری ، حضرت مولانا معراج الدین سرکانی ، حضرت مولانا عبدالواجد جنیدی ، حضرت علامہ محمد ثاقب جنیدی ، علامہ ڈاکٹر شمس الرحمن شمس ، حضرت مولانا عقل وزیر چشتی ، حضرت مولانا اسماعیل حقی اور چیئر مین ممتاز حسین قادری نے خصوصی طور پر شرکت کی ۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر ڈاکٹر پیر محمد نورالحق قادری نے کہا کہ آج ہماری خوش بختی ہے کہ ہم ایک عظیم کامل ولی کی یاد میں جمع ہوئے ہیں جو تھے فقیر اور بوریاں نشین لیکن اللہ تعالیٰ نے اپنی بندگی، شریعت اور طریقت کا ان سے ایسا کام لیا کے انمول موتی بناکر اپنے بندوں کے سامنے بے تاج بادشاہی بخشتی جنہیں اپنی زندگی میں بھی لاکھوں لوگوں کے عقیدت کا مرکز بنا دیا تھا اور آج جب دنیا سے فرما گئے ہیں بھی ہزاروں لوگ اس اللہ کے نیک بندے جناب شیخ گل صاحب مبارک کے لیے تعزیتی مجالس منعقد کرتے ہیں۔

شیخ المشائخ کانفرنس

مزید : صفحہ آخر