اہلکاروں کا نوجوان پر تشدد پولیس ٹیم وین تلے کچل کر فرار،اہل علاقہ کا احتجاج 4ملازمین پر مقدمہ

اہلکاروں کا نوجوان پر تشدد پولیس ٹیم وین تلے کچل کر فرار،اہل علاقہ کا احتجاج ...

رحیم یارخان(نمائندہ پاکستان)ظاہرپیر کی رہائشی لطیف مائی کو پولیس کو اپنی تحریری شکایت میں بیان کیا کہ وہ اپنے بھائی(بقیہ نمبر48صفحہ12پر )

کوملنے کیلئے آئی ہوئی تھی کہ اسی دوران تھانہ رکن پور پولیس نے موضع پوران کے علاقہ میں جواریوں کی گرفتاری کیلئے چھاپہ مارا اور فرار ہونے والے جواریوں کا تعاقب کرتے ہوئے اس کے بھائی عبدالغفار جو کہ گیس لینے کے لئے جارہا تھا تو پولیس نے جواریوں کاساتھی سمجھ کر اسے پکڑلیا، مزاحمت اور واویلا کرنے پر پولیس کی جانب سے بھائی عبدالغفار کوتشدد کانشانہ بنانا شروع کردیا جس کے نتیجہ میں وہ بے ہوش ہوکر گرگیا، اہل علاقہ کو طیش میں آتا دیکھ کر تھانہ رکن پور کی پولیس وین بھگالی اور بے ہوش ہونے والے عبدالغفار پر چڑھادی جس کے نتیجہ میں اس کی موت واقع ہوگئی۔ ورثاء نے اہل علاقہ کے ہمراہ تھانہ رکن پور کا گھیراؤ کرتے ہوئے احتجاج شروع کردیا تھا۔ اطلاع پاکر ڈی ایس پی صدر سرکل فرخ جاوید موقع پر پہنچ گئے، اور مزاکرات کے بعد احتجاج کرنے والے افراد منتشر ہوگئے تھے، ڈی پی او عمرسلامت نے فوری نوٹس لیتے ہوئے ہمشیرہ لطیف مائی کی مدعیت میں سب انسپکٹر رفیق احمد سمیت چار ملازمین کے خلاف قتل کامقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی۔

فرار

مزید : ملتان صفحہ آخر