حکومت چیئرمین پی اے سی کو ہٹا سکتی ہے، وسیم سجاد

حکومت چیئرمین پی اے سی کو ہٹا سکتی ہے، وسیم سجاد
حکومت چیئرمین پی اے سی کو ہٹا سکتی ہے، وسیم سجاد

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق چیئرمین سینیٹ وسیم سجاد نے کہا ہے کہ حکومت چاہے تو چیئرمین پبلک اکاؤنٹس کمیٹی (پی اے سی) کو ہٹا سکتے ہے۔

سابق چیئرمین سینٹ وسیم سجاد نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چیئرمین پی اے سی کو حکومت کسی بھی وقت ہٹا سکتی ہے جبکہ کمیٹی ممبران اکثریت کے بنیاد پر چیئرمین کو ہٹا سکتے ہیں۔وسیم سجاد نے کہا کہ ہمارے پارلیمانی نظام کی بنیاد اکثریت پر ہے جب کہ وزیر اعظم کا انتخاب بھی اکثریت کی بنیاد پر ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پبلک اکاو¿نٹس کمیٹی 29 ارکان پر مشتمل ہے جس میں حکومت اور اس کے اتحادیوں کی تعداد 16 ہے جب کہ 12 ارکان کا تعلق تحریک انصاف سے ہے۔کمیٹی میں ایم کیو ایم پاکستان، بی این پی مینگل، بی اے پی اور پاکستان مسلم لیگ کے کا ایک ایک رکن شامل ہے جبکہ آزاد حیثیت سے جیتنے والے علی نواز شاہ بھی حکومتی اتحادی ہیں۔پی اے سی کمیٹی میں اپوزیشن اتحاد کے پاس ممبران کی تعداد 13 ہے۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد