کھلاڑیوں کے لئے قذافی سٹیڈیم کے علاقے میں ہوٹل!

کھلاڑیوں کے لئے قذافی سٹیڈیم کے علاقے میں ہوٹل!

  



پنجاب سٹیڈیم لاہور میں کبڈی ٹورنامنٹ (عالمی)کی افتتاحی تقریب کے موقع پر صوبائی وزیر کھیل تیمور بھٹی نے بتایا کہ وزیراعلیٰ سردار عثمان بزدار نے قذافی سٹیڈیم کے قریب فائیو سٹار ہوٹل تعمیر کرنے کی منظوری دے دی ہے۔ قواعد و ضوابط اور تعمیراتی تخمینے کے بعد اس کی باقاعدہ طور پر تعمیر شروع ہو گی اور اسے جلد از جلد مکمل کیا جائے گا تاکہ کھیلوں کے مقابلے کے وقت جو غیر ملکی ٹیمیں آئیں ان کو یہاں ٹھہرایا جائے اور اس طرح سیکیورٹی کے باعث لاہور کے شہریوں کو ٹریفک کی جو مشکلات پیش آتی ہیں وہ بھی دور ہو سکیں، وزیر کھیل کے اس اعلان کا پرجوش خیر مقدم کیا جائے گا کہ لاہور میں سری لنکا، بنگلہ دیش کی کرکٹ ٹیموں اور کبڈی ورلڈکپ کے انعقاد کی وجہ سے جو حفاظتی انتظامات کئے گئے ان کی وجہ سے ٹریفک کی روانی متاثر ہوئی کہ اس علاقے میں قذافی سٹیڈیم کے علاوہ ثقافتی مرکز، ہاکی اور پنجاب سٹیڈیم بھی ہے اور یوں یہاں کھیلوں کا انعقادہ ہوتا اور ثقافتی تقریبات بھی، جبکہ یہاں کھلاڑیوں کی رہائش کے لئے کوئی مناسب ہوٹل نہیں۔ ان کو مال روڈ پر ٹھہرانا پڑتا ہے، یوں آمد و رفت اور کھیل کے وقت ٹریفک روکنے سے پریشانی ہوتی ہے، اس پر تنقید بھی ہو رہی تھی اور یہی تجویز دی جا رہی تھی کہ یہاں رہائش کے لئے ہوٹل تعمیر کرا دیا جائے۔ یوں بھی یہ گنجان علاقہ ہے کہ گلبرگ کی مرکزی سڑک اور لبرٹی کے ساتھ ساتھ ایم ایم عالم روڈبھی تجارتی مراکز ہیں۔ بہتر ہو گا کہ اس تجویز کو اعلان تک محدود نہ رکھا جائے، بلکہ جلد از جلد اس کی تکمیل کی جائے، اس کے ساتھ ہی قذافی سٹیڈیم والے دکان داروں کے لئے بھی کچھ سوچا جائے کہ میچوں کے دوران دکانیں بند کرا دینا بھی کوئی حل نہیں ہے۔ بہتر ہو گا کہ اس پورے علاقے کو ”مٹی سپورٹس سٹی“ قرار دے دیا جائے۔

مزید : رائے /اداریہ