سستی چینی کیلئے ڈیوٹی ختم،درآمد کی اجازت دی جائے،جہانگیر ترین

سستی چینی کیلئے ڈیوٹی ختم،درآمد کی اجازت دی جائے،جہانگیر ترین

  



 اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)تحریک انصاف کے رہنماء جہانگیر ترین نے کہاہے کہ یہ تاثر غلط ہے کہ چینی کی قیمتیں بڑھنے سے فائدہ مجھے ہوا، رواں  اور پچھلے سال مجھے نقصان ہوا ہے۔ مخالفین نے میرے خلاف بس کہانیاں پھیلائی ہوئی ہیں،گنے کی فی من قیمت بڑھنے کی وجہ سے چینی کی قیمت میں اضافہ ہوا، سستی چینی کے لئے چینی کی درآمد کی اجازت دی جائے اور اس پر ڈیوٹی ہٹائی جائے،آئندہ  8 سے 9 ماہ میں گردشی قرضے کو صفر پر لے آئیں گے، گندم کی قیمتوں سے متعلق   بدانتظامی کا اعتراف کرتا ہوں، پنجاب میں گندم کی قیمت بڑھنے کے خدشے کے پیش نظر سرحد بند کی گئی، سپلائی رکنے سے صرف 6 روز تک آٹے کی قیمتوں میں اضافہ ہوا۔ پیرکو نجی ٹی وی سے گفتگو میں تحریک انصاف کے رہنماء جہانگیر ترین نے کہا ہے کہ یہ تاثر دینا غلط ہے کہ چینی کی قیمتیں بڑھنے سے مجھے فائدہ ہوا ہے۔ مجھے پہلے سہ ماہی میں 137 ملین روپے کا فائدہ ہوا جب کہ دو سال پہلے مجھے 6 سو ملین کا فائدہ ہوا تھا۔ اس سال اور پچھلے سال مجھے نقصان ہوا ہے۔ مخالفین نے میرے خلاف بس کہانیاں پھیلائی ہوئی ہیں۔ میں نے کبھی کسان کا حق نہیں مارا 180 روپے فی من گنے کی قیمت دی۔ گنے کی فی من قیمت بڑھنے کی وجہ سے چینی کی قیمت میں اضافہ ہوا۔ پہلے 180 روپے فی من گنا تھا اب 230 تک پہنچا ہوا ہے۔ سیلز ٹیکس لگنے کی وجہ سے بھی چینی کی قیمت میں اضافہ ہوا۔ انہوں نے کہا ہے کہ چینی کی قیمت بڑھنے کا فائدہ کاشتکار کو ہوا ہے۔ میرا اگلی سہ ماہی کا منافع سب دیکھ لیں گے۔ میری عوامی کمپنی ہے کبھی کسی کو نقصان نہیں پہنچایا۔ انہوں نے کہا کہ سستی چینی کے لئے چینی کی درآمد کی اجازت دی جائے اور اس پر ڈیوٹی ہٹائی جائے۔ چینی کی قیمت میں کمی آجائے گی۔ 5 لاکھ ٹن چینی باہر سے منگوائی جائے۔ چینی مارکیٹ مستحکم ہو جائے گی۔ 5 سے 10 روپے اس پر سبسڈی دی جائے۔ مہنگائی کم کرنے کے لئے 5 سے 10 ارب کوئی بڑی بات نہیں۔

جہانگیر ترین 

مزید : صفحہ اول