ملکی خودمختاری کیلئے معاشی میدان میں اپنے پاؤں پر کھڑا ہو نا ضروری:شاہ محمود

  ملکی خودمختاری کیلئے معاشی میدان میں اپنے پاؤں پر کھڑا ہو نا ضروری:شاہ ...

  



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی) وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ تحریک انصاف کی حکومت نے ڈیڑھ سال میں بہت کچھ سیکھا اور دیکھا ہے، معیشت کی بہتری کیلئے عالمی خارجہ پالیسی کو معاشی تعلقات کے ساتھ جڑنا ہو گا، ملک کی خود مختاری کیلئے معاشی میدان میں اپنے پاؤں پر کھڑا ہونا ضروری ہے۔ وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کراچی میں ایف پی سی سی آئی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تاجر برادری کا ملک کی معیشت میں بڑا حصہ ہے اور ملک کی خود مختاری کیلئے معاشی استحکام ضروری ہے، عالمی سطح پر خارجہ پالیسی کے درمیان معاشی مفادات کا کلیدی کردار ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارتی حکومت نے نہ صرف عالمی قوانین کی خلاف ورزی کی بلکہ مقبوضہ کشمیر کی تباہ کر دیا، مقبوضہ کشمیر کی معیشت کو دو ارب ڈالر کا نقصان ہو چکا ہے اور مقبوضہ کشمیر میں چار لاکھ لوگ بے روزگار ہو چکے ہیں، بھارت نے مقبوضہ وادی میں معیشت کا جنازہ نکال دیا ہے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ خود مختار ملک اور عالمی خارجہ پالیسی کیلئے ہمیں معاشی میدان میں اپنے پاؤں پر کھڑا ہونا ہو گا جبکہ دہلی کے انتخابات میں بی جے پی کو شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ انہوں نے کہا کہ سلامتی کونسل کے صدر کو مسئلہ کشمیر کے حوالے سے 7خطوط لکھے ہیں کہ خدشہ ہے کہ مودی حکومت بھارت کے اندرونی مسائل سے توجہ ہٹانے کیلئے پلوامہ جیسی جعلی کارروائی پھر کر سکتا ہے، پاکستان میں معاشی حالات کو بہتر بنانے کیلئے سب کو مل کر کام کرنے کی ضرورت ہے، اس حوالے سے وزارت تجارت اور وزارت خارجہ کاروباری حضرات کو تمام تر معاونت فراہم کرنے کو تیار ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کو حکومت کو ڈیڑھ سال ہو چکے ہیں جن میں بہت سے کام کئے گئے اور ڈیڑھ سال میں حکومت نے بہت کچھ سیکھا ہے اور دیکھا بھی ہے، معیشت کی بہتری سے ملک میں خوشحالی اور غربت کا خاتمہ ممکن ہو سکتا ہے اور پاکستان کو عالمی خارجہ پالیسی کے معاشی میدان کو استعمال کرنا ہے۔۔انہوں نے کہا کہ بنگلادیش کاٹن پیدا نہ کرنے کے باوجود ویلیو ایڈیشن سے اربوں ڈالر کا سامان برآمد کر رہا ہے، چین کے ساتھ زراعت میں ریسرچ کا معاہدہ کیا جائے گا۔وفاقی وزیر نے کہا کہ زرعی اشیاء ایکسپورٹ کرنی چاہیے تھی لیکن ہم درآمد کر رہے ہیں، اربوں روپے کا خوردنی تیل درآمد کر رہے ہیں جو پاکستان خود پیدا کر سکتا ہے۔وزیر خارجہ نے کہا کہ قطر میں ایک لاکھ پاکستانیوں کو ملازمتیں دیئے جانے کا منصوبہ ہے، زرمبادلہ کے ذخائر کے لیے قطر سے مزید رقم آنے کا امکان ہے۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہا کہ بریگزٹ کے بعد برطانیہ نے پاکستان کی سکیورٹی صورتحال میں بہتری تسلیم کی، بریگزٹ کے بعد برطانیہ کو نئی منڈیوں کی تلاش ہے جو جو پاکستان فراہم کر سکتا ہے۔

شاہ محمود

مزید : صفحہ اول