آٹےکی قیمت میں اضافےاورمبینہ ذخیرہ اندوزی کےخلاف مسابقتی کمیشن اِن ایکشن،ایسی جگہ چھاپہ کہ کوئی تصور بھی نہ کر سکے

آٹےکی قیمت میں اضافےاورمبینہ ذخیرہ اندوزی کےخلاف مسابقتی کمیشن اِن ...
 آٹےکی قیمت میں اضافےاورمبینہ ذخیرہ اندوزی کےخلاف مسابقتی کمیشن اِن ایکشن،ایسی جگہ چھاپہ کہ کوئی تصور بھی نہ کر سکے

  



لاہور (این این آئی) ملک بھر میں آٹے کی قیمت میں اضافے اور مبینہ طور پر ذخیرہ اندوزی کے خلاف مسابقتی کمیشن حرکت میں آگیا اور سی سی پی کی ٹیم کی جانب سے فلور ملز ایسوسی ایشن کے دفتر پر چھاپہ مارکر اہم دستاویزات ضبط کر لی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق مسابقتی کمیشن نےپاکستان فلورملزایسوسی ایشن کے خلاف بادی النظر میں گندم کےآٹےکےسیکٹرمیں ساز بازاور اہم نئی معلومات کے حصول کےبعدتحقیقات کےعمل میں اس کےلاہوردفتر پرسرچ اورانسپکشن (تلاشی اور تفتیش) کا عمل انجام دیا۔سی سی پی نے 13دسمبر 2019 کے حالیہ فیصلے میں پاکستان فلورملزایسوسی ایشن کواپنےپلیٹ فار م کو گندم کےآٹےسےمتعلق حساس تجارتی معلومات کےتبادلے،پیداوار کی مقدارکےتعین اورگندم کےآٹےکی پرائس فکسنگ میں ملوث ہونے اور مسابقتی ایکٹ کے سیکشن 4 کی خلاف ورزی پر ساڑھے 7 کروڑ روپے جرما نہ عائد کیا تھا۔ سی سی پی نے اپنے اس فیصلے میں پاکستان فلور ملز ایسوسی ایشن کو واضح ہدایات دی تھیں کہ موجودہ اور مستقبل کی قیمتوں،پیداواراور مارکیٹنگ سے متعلق بات چیت، مشاورت اور فیصلے مسابقتی مخالف ہوتے ہیں اور ایسوسی ایشنز کو ان سے ہر حال میں دور رہنا چاہیے۔ ان واضح احکامات کے باوجود سی سی پی کو ملنے والی معلومات کے مطابق پاکستان فلور ملز ایسوسی ایشن اور اس کے ممبران بادی النظر میں مسابقتی ایکٹ کی خلاف ورزی کے مرتکب ہوئے ہیں۔سی سی پی انکوائری ٹیم نے اس سرچ اور انسپکشن کے عمل سے پاکستان فلور ملز ایسوسی ایشن کے دفتر سے اہم دستاویز بھی قبضے میں لے لی ہیں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور