ہالینڈ کے سابق وزیراعظم اور انکی اہلیہ کی یک ساتھ موت،دونوں کیسے مرے؟

ہالینڈ کے سابق وزیراعظم اور انکی اہلیہ کی یک ساتھ موت،دونوں کیسے مرے؟
ہالینڈ کے سابق وزیراعظم اور انکی اہلیہ کی یک ساتھ موت،دونوں کیسے مرے؟

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ایمسٹرڈیم (ڈیلی پاکستان آن لائن )ہالینڈ کے سابق وزیراعظم اور انکی اہلیہ کویوتھنیشیا (euthanasia) کے ذریعے ایک ساتھ جان سے مار دیا گیا۔جنگ کے مطابق غیرملکی میڈیا نے بتایا کہ سابق وزیراعظم ڈریس وان اگٹ اور ان کی اہلیہ نے آخری وقت میں ایک دوسرے کا ہاتھ تھاما ہوا تھا،غیرملکی میڈیا کے مطابق دونوں کی عمر 93 سال تھی اور یہ دونوں کافی وقت سے بیماری اور تکلیف میں مبتلا تھے جس کی وجہ سے اس طرح کا فیصلہ کیا گیا، سابق وزیراعظم کو 2019ءمیں ایک تقریب میں تقریر کے دوران برین ہیمرج ہوا تھا اور اس کے بعد وہ کبھی مکمل طور پر صحت یاب نہیں ہوئے تھے،ڈریس وان اگٹ 1977ءسے 1982ءتک ہالینڈ کے وزیراعظم رہے تھے،غیرملکی میڈیا کے مطابق نیدرلینڈ میں 2002سے یوتھنیشیا (euthanasia) کو قانونی حیثیت حاصل ہے،رپورٹس کے مطابق 2021ءمیں 38 جوڑوں نے مرضی سے موت کا انتخاب کیا تھا جبکہ 2022ء میں یہ تعداد 58 تھی۔
واضح رہے کہ (euthanasia) مرحلے کے دوران تکلیف میں مبتلا مریض کو اس کی مرضی کے بعد انجیکشن یا دیگر ذریعے سے دوا دی جاتی ہے جس سے کچھ ہی سیکنڈز یا منٹ میں اس کی موت واقع ہو جاتی ہے۔