امن و امان کی خراب صورتحال پر راولپنڈی چیمبر کا تشویش کا اظہار

امن و امان کی خراب صورتحال پر راولپنڈی چیمبر کا تشویش کا اظہار

راولپنڈی ( نیٹ نیوز)راولپنڈی چےمبر آف کامرس اےنڈ انڈسٹری کے صدر ڈاکٹر شمائل داﺅ د آرائیںنے کہا شہر میں امن و امان کی خراب صورتحال سے کاروباری برادری تشویش کا شکار ہے، ضلعی انتظامیہ کو بارہا باور کرایا کہ کاروباری برادری کو تحفظ فراہم کریں لیکن کوئی اقدامات نہ اٹھائے گئے آئے روز ڈکیتی اور قتل جیسی سنگین وارداتوں نے بزنس کمیونٹی کو بری طرح پریشان کر دیا ہے اگر انتظامیہ نے ملوث افراد کو گرفتار نہ کیا اور راولپنڈی چیمبر کی تشویش کو سنجیدگی سے نہ لیا گیا تو کاروباری برادری احتجاج کی راہ اپنائے گی جس کی تمام تر ذمہ داری ضلعی انتظامیہ پر ہو گی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے چیمبر میں ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر سینئر نائب صدر ملک شاہد سلیم، نائب صدر محمد عالم چغتائی اور دیگر اراکین بھی موجود تھے۔ڈاکٹر شمائل داﺅدنے کہا کہ کاروباری طبقہ توانائی بحران سے پہلے ہی مشکلات کا شکا رتھا اور حالیہ وارداتوں نے صورتحال کو مزید گھمبیر بنا دیا ہے ،ان حالات میں حکومت ٹھوس حکمتِ عملی اپنائے کاروباری برادری اور کاروباری لین دین کے مراکز میں خاص طور پر ایسے واقعات کی روک تھام کے لئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات اُٹھائے جائیں ۔صدر آر سی سی آئی نے کہا کہ حکومت اور مقامی انتظامیہ کو شہر میں تاجر برادری کے سر عام قتل پر کئی مرتبہ جھنجھوڑنے کی کوشش کی گئی مگر صورتحال پرتا حال قابو نہیں پایا جا سکا، ملک بھر کی کاروباری برادری کو قاتلوں چوروں اور ڈاکوﺅں کے رحم و کرم پر نہ چھوڑا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ ان حالات میں بیرونی سرمایہ کار ملک میں انوسٹمنٹ کو تیار نہیں اور مقامی تاجر و صنعت کا ربرادری اپنے کاروباروں کا بےرونی ممالک شفٹ کر رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ راولپنڈی میں بڑھتی ہوئی وارداتوں سے کاروباری طبقہ پریشانی کا شکار ہے،شہر کے سکون کو تباہ کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے اگر حکومت نے سخت ایکشن نہ لیا تو حالات مزید خراب بھی ہو سکتے ہیں انہوں نے کہا کہ راولپنڈی چیمبر تمام تاجر تنظیموں سے رابطے میں ہے اور آئندہ کے لائحہ عمل پر غور کر رہا ہے۔

مزید : کامرس


loading...