افغان جنگ کے دوران مدارس کیلئے نصاب مغربی یونیورسٹیز نے تشکیل دیا: ڈاکٹر فیصل

افغان جنگ کے دوران مدارس کیلئے نصاب مغربی یونیورسٹیز نے تشکیل دیا: ڈاکٹر فیصل
افغان جنگ کے دوران مدارس کیلئے نصاب مغربی یونیورسٹیز نے تشکیل دیا: ڈاکٹر فیصل

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)ترجمان دفترخارجہ ڈاکٹرفیصل نے کہا ہے کہ افغان جنگ کے دوران مدارس کیلئے نصاب مغربی یونیورسٹیز نے تشکیل دیااور اسی نصاب کے تحت جہادی تیار کیے گئے۔

ہفتہ وار پریس بریفنگ کے دوران ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ پاکستان خطے کے حوالے سے امریکی اور مغربی پالیسیوں کا خمیازہ بھگت رہا ہے، امریکا نے جہاد کے فلسفے کو اپنی مرضی کے مطابق تبدیل کیا۔ مغربی جامعات نے مدارس کےلئے نیا نصاب تشکیل دیا اور اسی نصاب کے تحت جہادیوں کو سوویت یونین کیخلاف لڑنے کیلئے تیار کیا گیا۔

یہ خبر بھی پڑھیں: بھارت جاسوسی والے 31 سیٹلائٹس خلا میں بھیج رہا ہے، سی آئی اے چیف کی ’ را‘ حکام سے ملاقاتوں سے آگاہ ہیں: ترجمان دفتر خارجہ

ڈاکٹر فیصل کا کہنا تھا کہ سوویت یونین کو افغانستان میں شکست کے بعد امریکا خطے سے چلا گیا، پاکستان اور خطے کے آج کے حالات اس امریکی حکمت عملی کا نتیجہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ الزام تراشیوں کی بجائے مغرب ذمہ دارانہ کردار ادا کرے، پاکستان میں پابندیوں کی فہرست میں شامل افراد کے اثاثے منجمد اور ان پر سفری پابندیاں عائد ہیں۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد