شام میں 10 روز کے دوران بمباری سے80 شہری جاں بحق ہوئے:اقوام متحدہ

شام میں 10 روز کے دوران بمباری سے80 شہری جاں بحق ہوئے:اقوام متحدہ
شام میں 10 روز کے دوران بمباری سے80 شہری جاں بحق ہوئے:اقوام متحدہ

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

بیروت(این این آئی)اقوام متحدہ کے مندوب برائے انسانی حقوق شہزادہ زید بن رعد الحسین نے بتایا ہے کہ شام میں دمشق کے قریب مشرقی الغوطہ میں اسدی فوج کی وحشیانہ بمباری کے نتیجے میں 10 ایام میں 85 عام شہری مارے گئے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ایک بیان میں اقوام متحدہ کے مندوب برائے انسانی حقوق نے کہا کہ شامی عوام کی مصیبتیں ختم ہونے کا نام نہیں لے رہیں، مشرقی الغوطہ میں 4 لاکھ افراد اسد رجیم کے خوفناک محاصرے میں ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ اسدی فوج مشرقی الغوطہ میں دن رات فضائی اور زمینی حملے کررہی ہے، جس کے نتیجے میں وہاں پرانسانی المیہ رونما ہونے کا اندیشہ ہے۔اقوام متحدہ کے مندوب نے مشرقی الغوطہ میں بمباری کے نتیجے میں ہونے والی ہلاکتوں پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہارکرتے ہوئے اسدی فوج کی غیرانسانی سرگرمیوں کی مذمت کی۔

رعد الحسین کا کہنا تھا کہ محصور اور نہتے شہریوں پر تباہ کن بمباری کرنے والے بنیادی انسانی حقوق اور انسانی اقدارواصولوں کی توہین کررہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ گزشتہ 10روز کے دوران کی گئی بمباری میں دمشق کے قریب 21 خواتین اور 30 بچوں سمیت 85عام شہری جاں بحق ہوچکے ہیں۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید : بین الاقوامی