فیسیں کم نہ کرنے پر سکولوں کی رجسٹریشن منسوخ کردینگے ، وزیر تعلیم

فیسیں کم نہ کرنے پر سکولوں کی رجسٹریشن منسوخ کردینگے ، وزیر تعلیم

لاہور( لیڈی رپورٹر )صوبائی وزیر سکولز ایجوکیشن مراد راس نے کہا ہے کہ پرائیویٹ تعلیمی اداروں کی فیسوں کے حوالے سے انہیں روزانہ شکایا ت مل رہی ہیں۔پرائیویٹ سکولز کو فیسوں میں کمی کرنے کے لیے 12فروری تک کی ڈیڈلائن دی گئی ہے۔ 12فروری کے بعد فیسوں میں کمی کے حوالے سے عدالتی احکامات پر عملدرآمد نہ کرنے والے پرائیویٹ سکولوں کی رجسٹریشن منسوخ کردی جائے گی یہ بات انہوں نے پنجاب اسمبلی میں ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔صوبائی وزیر مراد راس نے کہاکہ اس وقت محکمہ سکولز ایجوکیشن میں فروغ تعلیم کے عمل کو آگے بڑھانے کیلئے ساڑھے سات ہزار اساتذہ کی ضرورت ہے۔انہوں نے بتایا کہ سکولز ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ ایک جدید سافٹ وئیر تیار کر رہا ہے تا کہ تمام ضروری محکمانہ انفارمیشن ایک جگہ دستیاب ہو ۔انہوں نے کہا کہ عدالتی احکامات کی روشنی میں نجی سکولوں سے اضافی فیس واپس لے کر یہ رقم ان سکولوں میں زیر تعلیم بچوں کے والدین کو لوٹائیں گے ۔ پرائیویٹ سکولوں سے متعلق معاملات کو نبٹانے کیلئے قائم کی جانے والی ریگولیٹری اتھارٹی کا ڈرافٹ وزارت قانون کے پاس زیرِ غور ہے جسے آئندہ سیشن میں منظوری کیلئے پیش کیا جائے گا۔صو بائی وزیر نے کہا کہ پرائیوٹ سکولوں میں زیرِ تعلیم بچوں کے والدین سکول انتظامیہ کی جانب سے اضافی واجبات کی عدم ادائیگی کی صورت میں 0336-72151214 پر رابطہ کریں۔ان کے مسائل کو فوری طور پر حل کیا جائے گا۔

انہوں نے ہدایت کی کہ پرائیویٹ سکول مالکان فیسوں میں کمی کے فیصلے پر12فروری 2019ء تک عمل کریں وگرنہ ان کے خلاف قانون کے مطابق سخت کارروائی کی جائے گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...