غریبوں کیلئے لنڈا بازاد سے بھی خریداری مشکل ، قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگیں

غریبوں کیلئے لنڈا بازاد سے بھی خریداری مشکل ، قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے ...

لاہور( افضل افتخار) سردی کے ساتھ ہی غریبوں کا شاپنگ مال لنڈا بازار بھی مہنگا،قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگی گزشتہ سال کی نسبت قیمتوں میں دو گنا اضافہ ہوگیا حکومت کی جانب سے ٹیکس نے کمی پوری کردی جسکا بوجھ غریب عوام پر ڈال دیا گیا، تفصیل کے مطابق غریبوں کے لئے لنڈا بازار میں بھی مہنگائی کی وجہ سے شاپنگ مشکل ہوگئی لنڈا بازار میں اب ہر اچھی چیز بیس یا تیس روپے سے تجاوز کرکے سینکڑوں روپے میں فروخت ہورہی ہے عوام کے ساتھ ساتھ دکاندار بھی مہنگائی کا رونا رو روہے ہیں اس حوالے سے روز نامہ پاکستان کے زیر اہتما م کئے گئے سروے میں لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے لنڈا بازار میں مہنگائی کے ہاتھوں پریشانی کا اظہار کیا شائستہ،روبینہ،خالدہ،نبیلہ اور آصفہ نے کہاکہ غریب لوگوں کے لئے لنڈا بازار کسی نعمت سے کم نہیں تھا اور آسانی سے بہت سستے داموں ہر قسم کے کپڑے مل جاتے تھے مگر اب یہاں پر عام بازار جتنی ہی قیمتی وصول کی جارہی ہے جو غریب لوگوں پر بڑا ظلم ہے اس جانب حکومت کو توجہ دینے کی ضرورت ہے غریب لوگ دور دراز علاقوں سے یہاں پر خریداری کرنے کے لئے آتے ہیں مگر اب مہنگائی کے دور میں ان کو بھی شدید مایوسی ہورہی ہے ہم بچوں کے ساتھ ساتھ اپنے کپڑے بھی اس مہنگائی کے دور میں مہنگے داموں نہیں خرید سکتے مگر اب یہاں پر بھی منہ مانگی قیمت وصول کی جارہی ہے اس لئے شاپنگ کرنا بہت مشکل ہوگیا ہے ابراہیم،شرجیل،بابر،عادل،کاشف،عامر آصف اور ندیم نے کہا کہ حکومت کو کپڑوں پر سبسڈی دینے کی ضرورت ہے کیونکہ یہ عوام کے لےء ایک بنیادی چیز ہے اور اس کے بغیر اس کا گزارہ نہیں ہے مگر یہاں پر بھی دکانداروں نے سردی کی وجہ سے رش دیکھ کر قیمتیں اپنی من مانی مقرر کررکھی ہے اس حوالے سے اظہار خیال کرتے ہوئے محمد علی،عادل،اکبر،اسلم،عدیل،نصیر،عامر،بلال اور بشیر نے کہا کہ حکومت کی جانب سے غریب لوگوں کے کپڑوں پر بھی ٹیکس عائد کرکے ان کو مہنگا کردیا گیا ہے شاپنگ مال میں جدید ڈیزائن کے کپڑے بھی لنڈا بازار سے خریدے جاسکتے ہیں اب دکاندار بھی بہت ہوشیار ہوگئے ہیں اور جان بوجھ جو چیز پسند آجاتی ہے اس کی من مانی قمت وصول کرتے ہیں پہلے اس طرح سے نہیں ہوتا تھا یہ غریب لوگوں پر ظلم ہے اور اس جانب توجہ دینے کی ضرورت ہے ٹیکس کا فی الفور خاتمہ کیا جائے غریب لوگ تو یہاں سے ہی خریداری کرسکتے ہیں کیونکہ اس طرح سے جیب پر زیادہ بوجھ نہیں پڑتا بلکہ اب تو امیر لوگوں نے بھی لنڈا بازاروں کا رخ کرلیا ہے اس وجہ سے بھی قیمت بڑھ گئی ہے کیونکہ وہ منہ مانگی قیمت جو دے دیتے ہیں ہم وزیر اعظم پاکستان عمران خان اور چیف جسٹس آف پاکستان ثاقب نثار سے پرزور اپیل کرتے ہیں کہ اس کا بھی نوٹس لیا جائے اور جس طرح سے ملک میں کرپشن کے خلاف کاروائی ہورہی ہے اس جانب بھی توجہ دی جائے ان سے درخواست ہے کہ لنڈا غریبوں کی ضرورت ہے اس پر ٹیکس زیرو کیا جائے تاکہ لوگ زیادہ سے زیادہ خریداری کرسکیں ۔

لنڈا بازار

مزید : صفحہ اول


loading...