احتساب عدالت نے ارباب عالمگیر، انکی اہلیہ عاصمہ پر فرد جرم عائد کردی

احتساب عدالت نے ارباب عالمگیر، انکی اہلیہ عاصمہ پر فرد جرم عائد کردی

پشاور(آئی این پی )احتساب عدالت نے سابق وفاقی وزیر اور پیپلزپارٹی کے رہنما ارباب عالمگیر اور ان کی اہلیہ پر فرد جرم عائد کر تے ہوئے استغاثہ کے گواہان کو 24 جنوری کو طلب کر لیا ، جبکہ ارباب عالمگیر نے کہا ہے کہ ہماری 200 سال پرانی باپ دادا کی جائیداد ہے جو ہمیں منتقل ہوئی،جو جائیداد میرے نام پر نہیں ہے اس کی تفصیلات سے بھی نیب کو آگاہ کر چکا ہوں، نیب ایک مذاق کا ادارہ بن گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت پشاور میں ارباب عالمگیر اور ان کی اہلیہ عاصمہ عالمگیر کے خلاف آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے کیس کی سماعت ہوئی۔عدالت نے ملزمان پر فرد جرم عائد کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر استغاثہ کے گواہان کو 24 جنوری کو طلب کر لیا ہے۔پیشی کے موقع پر پیپلزپارٹی رہنما ارباب عالمگیر نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ہماری جائیداد 200 سال پرانی باپ دادا کی جائیداد ہے جو ہمیں منتقل ہوئی اور جو جائیداد میرے نام پر نہیں ہے اس کی تفصیلات سے بھی قومی احتساب بیورو (نیب)کو آگاہ کر چکا ہوں۔ارباب عالمگیر کی اہلیہ عاصمہ عالمگیر نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ نیب ایک مذاق کا ادارہ بن گیا ہے۔ ہمارے خلاف تو ریفرنس دائر کر دیے گئے لیکن وزیر دفاع پرویز خٹک پر ریفرنس دائر نہیں کیا گیا۔ارباب عالمگیر اور عاصمہ عالمگیر پر آمدن سے زائد اثاثے بنانے اور کرپشن کا الزام ہے جب کہ نیب کی جانب سے ملزمان کے خلاف 33 کروڑ 21 لاکھ روپے کا ریفرنس بھی دائر کیا گیا ہے۔

ارباب عالمگیر ؍فرد جرم

مزید : صفحہ اول


loading...