حکومت خطے میں کسی تنازع کا حصہ دار نہ بنے،زاہد محمود قاسم

  حکومت خطے میں کسی تنازع کا حصہ دار نہ بنے،زاہد محمود قاسم

  



لاہور(نمائندہ خصوصی)مرکزی علماء کونسل پاکستان کے چیئرمین اور انٹر نیشنل ختم نبوت موومنٹ پاکستان کے سیکرٹری جنرل صاحبزادہ زاہد محمود قاسمی نے کہا ہے کہ حکوت پاکستان کا خطے میں کسی تنازع کا حصہ نہ بننے اور امن کا شراکت دار بننے کا اعلان ملکی بقاء وسلامتی کا تقاضا ہے اور عالمی امن کے مفاد کی بھی ضرورت ہے۔ ماضی میں امریکی اتحاد کی وجہ سے پاکستان نے بہت نقصان اٹھایا ہے۔ ستر ہزار سے زائد مختلف طبقات نے قربانیاں دی ہیں لہٰذا اب پاکستان کو کسی بھی تنازع کا حصہ نہیں بننا چاہئے۔پاکستان کو امن کیلئے اپنا کردار اداکرنا چاہئے۔ دنیا بھر کے امن حلقوں کو بھی اس وقت اپنا کردار اداکرنا چاہئے۔ افغانستان اورمقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورتحال کے بعدہمیں اپنے قرب وجوار میں کسی اور جنگ کے شعلے دیکھنا نہیں چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ تمام مسلم ممالک اہل کفر کی آنکھوں میں کانٹا بن کر چبھتے ہیں۔فلسطین،کشمیر،عراق،لیبیاء اور افغانستان میں مسلمانوں کے خون کی ہولی کھیلی گئی۔ باطل قوتیں امت مسلمہ میں نفرت کا بیچ بوکر کامیابی کے جھنڈے گاڑنا چاہتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسلامی دنیا کو کمزور کرنے کی عالمی سطح پر کوششیں کی جارہی ہیں۔ امت مسلمہ میں اتحاد کی اشد ضرورت ہے۔ پاکستان کی سرزمین کو کسی صورت بھی غیروں کیلئے استعمال نہ ہونے دیا جائے۔ دنیا بھر میں مسلمانوں کا قتل عام اور مسلمانوں کافلسطین سے لیکر کشمیر تک خون بہایا جارہا ہے۔ پاکستان میں ایک بار پھر کچھ قوتیں فرقہ وارانہ فسادات کی آگ بھڑکانے کی سازشیں کررہی ہیں جس کو پہلے بھی علماء نے ناکام بنایا ہے اور اب بھی مرکزی علماء کونسل پاکستان دشمن کی ہر سازش کو ناکام بنائے گی۔ دینی قوتیں ہمیشہ پر امن رہی ہیں اور آئندہ بھی وطن عزیز کو اپنے اتحاد سے پر امن بنائیں گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1