اسلامی نظریاتی کونسل پر تنقید کرنے والے بدنامی کو کامیابی سمجھتے ہیں،حافظ ادریس

  اسلامی نظریاتی کونسل پر تنقید کرنے والے بدنامی کو کامیابی سمجھتے ...

  



لاہور (نمائندہ خصوصی) جماعت اسلامی پاکستان کے راہنما حافظ محمد ادریس نے کہا ہے کہ اسلامی نظریاتی کونسل پربلاجواز تنقید کرنے والے وزیربدنامی کوہی اپنی کامیابی سمجھتے ہیں۔اسلام اور علماء کے خلاف تعصب اور بدکلامی ان کا وطیرہ بن چکا ہے۔ جس ملک کے صدر،وزیراعظم،چیف جسٹس اور آرمی چیف مسلمان ہیں وہاں اسلامی نظام کے بجائے انگریز کا نظام رائج ہونا بدقسمتی ہے۔لا الہ الا اللہ چند الفاظ نہیں اللہ کے ساتھ ایک عہد ہے اور جو اس عہد کو پورا نہیں کرتا اسے دنیا و آخرت میں ناکامی کا منہ دیکھنا پڑتا ہے۔ سودی معیشت اور لارڈ میکالے کا نظام تعلیم ملک کو تباہی کی طرف لے جارہا ہے۔مسلمان اپنے اصل کی طرف لوٹ آئیں تو آج بھی دنیا پر غلبہ حاصل کرسکتے ہیں۔ سودکی بنیاد پر ملکی معیشت درست نہیں ہوسکتی۔ 

امریکی سرپرستی میں بھارت کشمیر اور اسرائیل فلسطین میں مظالم ڈھا رہا ہے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے جامع مسجد منصورہ میں جمعہ کے بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔حافظ محمد ادریس نے کہا کہ امریکہ دنیا بھر میں مسلمانوں پر حملہ آور ہے،ٹرمپ کی موجودگی میں دنیا کا امن داؤ پر لگارہے گا۔امریکہ عالم اسلام کے وسائل لوٹ رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ آج کشمیر میں مودی اور اسرائیل میں نیتن یاہو مسلمانوں کا قتل عام کررہے ہیں لیکن مسلم حکمران متحد ہوکر استعماری طاقتوں کا مقابلہ کرنے کی بجائے ان کے زر خرید غلام بنے ہوئے ہیں جس کی امت مسلمہ کو بھاری قیمت اداکرنا پڑ رہی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...