وکالت مقدس پیشہ، ہمیں اسی کی بدولت یہ آزاد ملک ملا: چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ

وکالت مقدس پیشہ، ہمیں اسی کی بدولت یہ آزاد ملک ملا: چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی)چیف جسٹس لاہورہائی کورٹ مسٹرجسٹس مامون رشید شیخ نے کہاہے کہ وکالت کا شعبہ ایک مقدس پروفیشن ہے، بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح اور مصورِ پاکستان علامہ محمد اقبال نے بھی اس مقدس پیشہ کو اپنایا اور اپنی وکالت کی بدولت ہمیں یہ آزاد ملک فراہم کیا۔چیف جسٹس نے ان خیالات کا اظہار لاہور کی مقامی یونیورسٹی کے لاء سٹوڈنٹس کے عدالت عالیہ لاہور کے دورہ کے موقع ان سے گفتگو کرتے ہوئے کیا،چیف جسٹس نے (بقیہ نمبر41صفحہ7پر)

مزیدکہاکہ وکلاء اپنی مثبت معاونت سے انصاف کے متلاشی سائلین کو بہترین انصاف کی فراہمی میں کردار ادا کرتے ہیں، چیف جسٹس نے مزید کہا کہ پاکستان کی نامور شخصیات عدالت عالیہ لاہور کے چیف جسٹس کے منصب پر فائز رہیں اور میرے لئے قابل فخر ہے کہ پاکستان کے ایک عظیم ادارے کا سربراہ بنا ہوں، ہمارا بنیادی مقصد عام سائلین کو فوری اور معیاری انصاف کی فراہمی ہے، جس کے لئے تمام وسائل بروئے کار لائے جارہے ہیں، مقامی یونیورسٹی کے شعبہ قانون کے طلبہ و طالبات کے وفدکوچیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ نے چیف کورٹ کا دورہ کروایا اور مقدمات کی کارروائی کے حوالے سے بریف کیا، چیف جسٹس نے طلباء و طالبات کو لاہور ہائی کورٹ کی تاریخ کے بارے میں بتاتے ہوئے لاہور ہائی کورٹ کے سابق چیف جسٹس صاحبان کے بارے میں بھی تفصیل سے بتایا،طلبہ و طالبات نے چیف جسٹس مامون رشید شیخ سے مختلف سوالات بھی کئے، اس موقع پر رجسٹرار لاہور ہائیکورٹ عبدالستار بھی موجود تھے،بعدازاں طلبہ و طاہبات کو لاہور ہائی کورٹ کی تاریخی عمارت کا دورہ بھی کروایا گیا۔

چیف جسٹس ہائیکورٹ 

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...