ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال مظفر گڑھ میں بے ضابطگیاں‘ٹھیکہ ریکوری میں ردوبدل

ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال مظفر گڑھ میں بے ضابطگیاں‘ٹھیکہ ریکوری میں ردوبدل

  



مظفرگڑھ (بیورو رپورٹ‘تحصیل رپورٹر) ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال مظفرگڑھ میں بے ضابطگیوں کے انکشافات ہوتے ہی حالیہ سال میں ہونے والے سائیکل اسٹینڈ کے ٹھیکہ کی ریکوری میں ردوبدل ہوا ہے۔حالیہ ٹھیکہ میں کامیاب بولی دھندہ تین ماہ کے پیسے دئے بغیر غائب ہوگیا۔تفصیل کے مطابق ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال مظفرگڑھ میں سال 2019-20 کے سائیکل اسٹینڈ کے ٹھیکے کی ریکوری میں بے ضابطگیوں کے انکشاف سامنے آگئے ہیں۔ذرائع کے مطابق پچھلے سال کامیاب بولی دہندہ(بقیہ نمبر35صفحہ12پر)

عامر شاہ نامی ٹھیکیدار نے قانون کی مبینہ خلاف ورزی کرتے ہوئے انتظامیہ کی مبینہ ملی بھگت سے ٹھیکہ آگے ٹرانفسر کیا اسکے بعد چند دن پہلے تین ماہ کے پیسے دئے بغیر غائب ہوگئے جسکی وجہ سے سرکاری کو بھاری نقصان ہوا جبکہ ذرائع نے مزید بتایا کہ ہسپتال انتظامیہ نے عامر شاہ نامی ٹھیکیدار کو عرصہ دراز سے جاری مبینہ غیر قانونی سپورٹ اور اپنی نااہلی چھپانے کے لئے سائیکل اسٹینڈ کا ٹھیکہ بغیر اشہتار کے جبار دستی نامی شخص کو قانونی تقاضوں کو پامال کرتے ہوئے اور اختیارات کے ناجائز استعمال پر جاری کردیا ہے۔یاد رہے کہ اس قبل بھی انتظامیہ کے مبینہ آشیرباد سے ہسپتال کی کینٹین اور سائیکل اسٹینڈ پر لوٹ مار اور غیر معیاری اشیاء کی متعدد شکایات سامنے آتی رہی ہیں جبکہ سابق ڈپٹی کمشنر نے بھیس بدل کر بھی عوامی شکایات پر دورہ کیا تھا مگر ہسپتال انتظامیہ کی مسلسل مبینہ نااہلی کیوجہ سے کوئی عملی کارروائی سامنے نہ آئی۔عوامی سماجی حلقوں نے کمشنر ڈی جی خان نسیم صادق اور ڈپٹی کمشنر انجئینر امجد شعیب ترین سے مکمل انکوائری کراکر عوام کو ہسپتال میں کینٹین اور سائیکل اسٹینڈ پر ہونے والی لوٹ مار سے نجات دلانے کا مطالبہ کیا ہے۔

اجلاس

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...