پاکستان متنازعہ بھارتی شہریت بل کا معاملہ عالمی سطح پر اٹھائے، سید فخر امام

  پاکستان متنازعہ بھارتی شہریت بل کا معاملہ عالمی سطح پر اٹھائے، سید فخر ...

  



 اسلام آباد(آئی این پی)چیئرمین کشمیر کمیٹی سید فخر امام نے کہا کہ پاکستان کو  بھارتی متنازعہ شہریت بل کا معاملہ عالمی سطح پر اٹھانا چاہیے،مودی حکومت نے بھارت کے  سیکولر تشخص کا  پردہ چاک کر دیا  ہے،مودی ہندوتوا کے بانی کے طور پر ابھرے ہیں مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی دھجیاں بکھیر دی گئی ہیں بھارت کے مدبر بھی کہنے لگے ہیں کہ عالمی سطح بھارت  کا امیج تباہ ہو رہا ہے۔پارلیمینٹ میں میڈیانمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے سید فخر امام نے کہا کہ کوشش ہے چین کے تعاون سے ایک مرتبہ پھر اقوام متحدہ کی سیکورٹی کونسل میں کشمیر کا معاملہ اٹھایا جائے پہلے بھی سیکورٹی کونسل میں کشمیر کا معاملہ 54سال بعد اٹھایا گیا ہے۔بھارت کی وجہ سے سارک اور آسیان کی تنظیم غیر فعال ہوئی پڑی ہیں چیئر مین کشمیر کمیٹی نے کہا کہ  جواہر لال نہرو یونیورسٹی میں آرایس ایس غنڈوں کی جانب سے مارپیٹ کی امریکہ برطانیہ سمیت عالمی تعلیمی اداروں نے مذمت کی ہے،شیو شنکر مینن سابقہ سیکرٹری خارجہ اور چدم برم  جیسے بھارتی مدبر بھی اس بات کا برملا اظہار کر چکے ہیں کہ مودی حکومت کے مسلم مخالف اور اقلیت مخالف اقدامات سے بھارت کا  چہرہ داغدار ہو رہا ہے۔سید فخر امام نے کہا کہ متنازعہ  بھارتی  شہریت بل کا معاملہ  پاکستان کو عالمی سطح پر اٹھانا چاہیے اس بل کے ذریعے بھارت نے  آسام میں 19لاکھ لوگوں کو شہریت سے محروم کر دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران  خان نے اقوام متحدہ میں کشمیر کا معاملہ بھر پور طریقے سے اٹھایا  بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر کے بارہ ہزار سے زائد  لوگوں کو مقبوضہ کشمیر سے لاپتہ کیا ہوا ہے  چیئرمین کشمیرکمیٹی سید فخر امام نے بتایا کہ فروری میں وزیر اعظم عمران خان  ملائیشیا کا دورہ کریں گے جبکہ ترکی کے صدر بھی جلد پاکستان کا دورہ کریں گے۔

سید فخر امام

مزید : صفحہ آخر