جے ایس بینک نے اوریکل آئی ٹی انفرااسٹرکچر سے کارکردگی میں 60 فیصد اضافہ کرلیا

جے ایس بینک نے اوریکل آئی ٹی انفرااسٹرکچر سے کارکردگی میں 60 فیصد اضافہ کرلیا

کراچی(اکنامک رپورٹر)جے ایس بینک لمیٹڈ(JS Bank) نے اوریکل انفرااسٹرکچر کے ذریعے اپنے آئی ٹی پلیٹ فارم کو مربوط کرکے انتظامی اخراجات میں کمی اور آپریشنل کارکردگی میں 60 فیصد اضافہ کیا ہے۔ اوریکل ایگزاڈیٹا ڈیٹابیس مشین کے ذریعے جے ایس بینک اپنے کور بینکنگ سلوشنز کو چلانے کے ساتھ کمرشل بینکنگ، کارپوریٹ بینکنگ اور کریڈٹ کارڈ ایپلی کیشنز کو مدد فراہم کرے گا۔ نئے سسٹم سے بینک کے آئی ٹی سسٹم کی کارکردگی بڑھانے کے ساتھ ترقی کے دیگر توسیعی منصوبوں میں بھی مدد ملے گی۔ اوریکل ایگزاڈیٹا ڈیٹا بیس مشین سے بینک اسٹوریج اور بیک اپ کے انتظام کے حوالے سے ہونے والے انتظامی اخراجات کو کم کرسکے گا۔ جے ایس بینک نے بیک اپ ٹائم کو 70 فیصد کم کیا ہے۔

جے بیس سے اوریکل ڈیٹا بیس پر منتقلی سے آن لائن ٹرانزیکشن پراسسنگ میں بہتری واقع ہوئی ہے اور کلوز بزنس آپریشن ٹائم میں 30 فیصد کمی ہوئی ہے۔جے ایس بینک کے چیف انفارمیشن آفیسر، عمران سومرو نے کہا کہ ایگزاڈیٹا ڈیٹابیس مشین کی بہترین کارکردگی، توسیعی خصوصیت اور اعتماد کے ذریعے امور کو مربوط اور بینک کی استعداد میں قابل ذکر اضافہ کرنے میں مدد ملی ہے۔ اوریکل ایگزا ڈیٹا سے OLTP، بزنس آپریشنز اور دیگر بینکنگ امور کو مزید موثر بنانے میں مدد ملی اور ہمیں آئندہ بھی ٹرانزیکشن کی تعداد میں اضافے کی ضروریات کو پورا کرنے میں سہولت ملے گی۔ڈائریکٹر سیلز، ٹیکنالوجی بزنس، اوریکل پاکستان اور افغانستان، وقاص ہاشمی نے کہا کہ ایگزاڈیٹا ڈیٹابیس مشین پر آئی ٹی انفرااسٹرکچر مربوط کرنے کے بعد جے ایس بینک اب مستحکم پلیٹ فارم کا حامل بینک بن گیا ہے جو پائیدار ترقی کا سفر شروع کرسکتا ہے۔ بینک کو ایگزاڈیٹا کے فوائد ملنا پہلے ہی شروع ہوگئے ہیں جن کے باعث بینک مقامی مالیاتی انڈسٹری میں زیادہ بہتر مسابقت کا حامل ہو گیا ہے۔اس ضمن میں بینک کو چوبیس گھنٹے پلاٹینم سپورٹ بھی اوریکل سے حاصل ہوگی جس سے بینک ریموٹ فالٹ کی نگرانی اور مشین سوفٹ ویئر سہ ماہی سطح پر جدید بنا سکے گا۔

مزید : کامرس