وزیراعظم کامودی سے ملاقات کے دوران معذرت خواہانہ رویہ باعث تشویش ہے، رحیق عباسی

وزیراعظم کامودی سے ملاقات کے دوران معذرت خواہانہ رویہ باعث تشویش ہے، رحیق ...

لاہور(نمائندہ خصوصی)پاکستان عوامی تحریک کے مرکزی صدر ڈاکٹر رحیق عباسی نے پاک بھارت وزرائے خارجہ کی ملاقات اور مشترکہ اعلامیہ پر اپنے شدید ردعمل میں کہا ہے کہ وزیراعظم پاکستان کے نریندر مودی سے ملاقات کے دوران معذرت خواہانہ رویے سے قوم میں اضطراب اور تشویش ہے، مشترکہ اعلامیہ میں ممبئی حملوں کی تحقیقات کا ذکر ہے بلوچستان میں ’’را ‘‘کی دہشتگردی کے خاتمہ کا ذکر کیوں نہیں؟ گزشتہ روز مرکزی سیکرٹریٹ میں اخبار نویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کیا وزیراعظم نے نریندر مودی سے پوچھا کہ آپ پاکستان توڑنے کی سازش میں پیش پیش کیوں تھے؟ ’’را‘‘ بلوچستان میں دہشتگرد گروپوں کی مالی تکنیکی سپورٹ کیوں کررہی ہے؟ بھارت اقتصادی کوریڈور کے منصوبے کو ختم کرنے کے درپے کیوں ہے؟ مقبوضہ کشمیر میں وسیع پیمانے پر انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں بند کیوں نہیں ہورہیں؟ بھارت کی بارڈر، سکیورٹی فورسز آئے روز بلا اشتعال فائرنگ کر کے ہمارے جوانوں اور سویلین شہریوں کو شہید کیوں کررہی ہیں؟ انہوں نے کہا کہ ماہی گیر اور کشتیاں چھوڑنے کے معاہدوں سے پاک بھارت تعلقات معمول پر نہیں آئینگے اس کیلئے ضروری ہے بھارت مروجہ بین الاقوامی قوانین کا احترام کرے اور وزیراعظم پاکستان معذرت خواہانہ رویہ ترک کریں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1