ضیا اللہ آفریدی کی کرپشن نے پی ٹی آئی کی گڈ گورننس کی حقیقت کھول دی،نصیر احمد

ضیا اللہ آفریدی کی کرپشن نے پی ٹی آئی کی گڈ گورننس کی حقیقت کھول دی،نصیر احمد

لاہور(نمائندہ خصوصی)پاکستان پیپلز پارٹی انسانی حقوق ونگ لاہور کے رہنماؤں نصیر احمد، عمر حیات تبسم ، شیخ علی سعید، حسن ایوب نقوی،سیف اللہ کھوکھر، اختر شاہ، ابوہاشمی نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا کہ خیبر پختونخواہ کے صوبائی وزیر معدنیات ضیا اللہ آفریدی کی کرپشن نے تحریک انصاف کی گڈ گورننس اور تبدیلی کے نعرہ کی حقیقت کھول دی ہے ، خیبر پختونخواہ میں اسوقت کرپشن کا بازار گرم ہے اور سرکاری وسائل کی لوٹ مار ہورہی ہے ، تحریک انصاف وہ جماعت ہے جو تمام جماعتوں سے نکالے گئے کرپٹ عناصر کی آخری آماجگاہ ہے ، اس سے پہلے بھی شیرپاؤ کی جماعت کے وزیروں کو کرپشن کرنے پر حکومت سے نکالا جا چکا ہے لیکن اقتدار بچانے اور بلدیاتی الیکشن میں جوڑ توڑ کیلئے انہی کرپٹ عناصر سے اتحاد کیا جارہا ہے ، انہوں نے کہا کہ ضیا اللہ آفریدی عمران خان کا رائٹ ہینڈ ہے اور پارٹی کو بے دریغ فنڈ بھی دیتا رہا ہے ، قومی احتساب بیورو نے بڑی محنت سے صوبائی وزیر معدنیات ضیا اللہ آفریدی کو کرپشن میں ملوث ہونے پر گرفتار کرنے والی تھی کہ ایک منظم سازش اور صوبائی وزیر معدنیات کو بچانے کے لئے صوبائی حکومت کے نام نہاد احتساب بیور ونے گرفتار کر لیا، حقیقت یہ ہے کہ نیب سے بچانے کے لئے 9افسران اور صوبائی وزیر کو گرفتار کیا گیا۔

، انہوں نے مطالبہ کیا کہ نیب کو خیبر پختونخواہ میں آزادانہ کام کرنے کا موقع فراہم کیا جائے اور صوبائی حکومت کا نام نہاد احتساب بیورو بند کیا جائے ، کرپشن کا شور مچانے والے عمران خان کے حواری خیبر پختونخواہ کو نیا پاکستان بنانے کے نام پر لوٹ رہے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4