خاتون نے غیرت کے نام پر آدمی کو قتل کردیا

خاتون نے غیرت کے نام پر آدمی کو قتل کردیا
خاتون نے غیرت کے نام پر آدمی کو قتل کردیا

  

استنبول(مانیٹرنگ ڈیسک) غیرت کے نام پر خواتین کو قتل کرنا ہمارے معاشرے کا سیاہ ترین پہلو ہے، لیکن آپ یہ جان کر حیران ہوں گے کہ ترکی میں ایک خاتون نے اپنے شوہر کو ’’غیرت‘‘ کے نام پر قتل کر دیا ہے۔ ہمارے معاشرے کو اس واقعے سے سبق سیکھنا چاہیے اور اس وقت سے ڈرنا چاہیے جب یہ رجحان ہمارے یہاں بھی جنم لے لے، کیونکہ اپنی بیویوں کو غیرت کے نام پر قتل کرنے والوں کا خود کا دامن کس قدر صاف ہوتا ہے یہ ہم سب اچھی طرح جانتے ہیں۔

مزید پڑھیں:کس طرح خواتین کے سامنے مرد بے بس ہو جاتے ہیں؟جدید تحقیق نے ہمارے خدشات درست ثابت کر دیئے

ترکی میں شوہر کو قتل کرنے کا واقعہ اڈانا کے علاقے میں پیش آیا جہاں 28سالہ خاتون سیلم کیرابلت نے اپنے 33سالہ شوہر حسن کیرابلت کو پستول سے گولیاں مار کر قتل کیا۔ ترک اخبار ’’دی حریت ڈیلی‘‘ کے مطابق خاتون کا کہنا تھا کہ ’’غیرت کے نام پر ہمیشہ خواتین ہی کیوں قتل ہوں؟ مردوں کو بھی غیرت کے نام پر قتل ہونا چاہیے، میں نے اپنے شوہر کو غیرت کے نام پر قتل کیا ہے۔‘‘ خاتون نے پولیس کو بیان دیتے ہوئے کہا کہ ’’ میراشوہر مجھے بدکاری پر لگانا چاہتا تھا اور انکار کرنے پر بہیمانہ تشدد کرتا تھا اس لیے میں نے اپنے گھر میں موجود پستول سے گولی مار کر اسے مارڈالا۔ ‘‘واضح رہے کہ خاتون نے شوہر کو قتل کرنے کے بعد خود ہی پولیس کو بلا لیا اور موقع پر ہی اپنا جرم قبول کر لیا تھا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس