فلم کوپسند یا نا پسندکرنے کا حق صرف عوام کے پاس ہے، معراج خان

فلم کوپسند یا نا پسندکرنے کا حق صرف عوام کے پاس ہے، معراج خان
فلم کوپسند یا نا پسندکرنے کا حق صرف عوام کے پاس ہے، معراج خان

  


لاہور(فلم رپورٹر) اداکارہ وماڈل معراج خان نے کہا کہ فلم کوپسندیا نا پسند کرنے کا حق صرف اورصرف عوام کے پاس ہے ، جس کوکوئی بھی فنکار، ہدایتکاریا فلمساز چھین نہیں سکتا۔مجھے سلور سکرین پر کام کا موقع ملا تو بولڈ کام کروں گی۔ہماری بھولی بھالی عوام کو گلیمر اور ولگیریٹی میں فرق معلوم نہیں ہم بطور فنکار اور تکنیک کار بس یہی کوشش کرسکتے ہیں کہ اپنی تمام ترصلاحیتوں بروئے کارلاتے ہوئے بس اچھی فلم پروڈیوس کریں۔ باقی فیصلہ وہ فلم بین کریں گے جواپنا قیمتی وقت نکال کراورپیسے خرچ کرکے سینما گھرپہنچتے ہیں۔ انہوں نے کہا ہے کہ فلم کی کامیابی اور ناکامی کا فیصلہ عوام کرتے ہیں، کوئی بھی فلم اچھی یا بری بنائی نہیں جاتی، اس کا فیصلہ توسینما گھرمیں آنے والی عوام کی بڑھتی اورگھٹتی تعداد کرتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا بھرمیں بننے والی تمام سپرہٹ اورفلاپ فلموں کے پروڈیوسر، ڈائریکٹراورفنکاروں کے علاوہ تکنیکی عملے سے بات کی جائے تووہ اپنی فلم کوصدی کی شاہکارفلم ہی قراردیں ۔ ان کے دلائل اورگفتگواس قدرجاندارہوگی کہ اس کوسننے والے اس بات کوماننے پرتیاربھی ہوجائیں گے۔ لیکن یہ سب باتیں ہی ہیں۔

مزید : کلچر


loading...