ساہیوال/سرگودھا:پارٹی کو چھوڑ کر آزادامیدوار کی حمایت

ساہیوال/سرگودھا:پارٹی کو چھوڑ کر آزادامیدوار کی حمایت

ساہی وال /سرگودھا(رانا محمد اسلم سے)حلقہ پی پی 80اوراین اے 92میں آئے روز عجیب وغریب سیاسی تبدیلیاں سامنے آرہی ہیں پارٹی پوزیشن سے ہٹ کر بعض امیدوار علاقائی حالات کو مد نظر رکھ کراپنے لئے تو ووٹ مانگ رہے ہیں لیکن چند سیاسی مجبوریوں کے تحت حلقہ این اے 92میں آزاد امیدوار میاں ظفر احمد قریشی کی سپورٹ کررہے ہیں اور اپنی جماعت پی ٹی آئی کے امیدوار صاحبزادہ نعیم الدین سیالوی کو مایوس کررہے ہیں حلقہ پی پی 80میں پی ٹی آئی کے امیدوار غلام علی اصغر لاہڑی تاحال بہتر پوزیشن میں ہیں اپنے ووٹرز اور حامیوں سمیت صاحبزادہ نعیم الدین سیالوی ،کو ووٹ دینے سے گریزاں ہونکی سیاسی مجبوری کچھ اس طرح ہے کہ قریشی خاندان آف رادھن کے میاں محمد الیاس قریشی سابق مشیر وزیر اعلیٰ پنجاب کے قریبی عزیز سابق ڈی آئی جی میاں ظفر احمد قریشی جن سے پی ٹی آئی نے ٹکٹ واپس لیکر صاحبزادہ نعیم الدین سیالوی کو ٹکٹ دیا تھا۔میاں ظفر احمد قریشی آزاد امیدوار کے طورپر سامنے اچھی پوزیشن میں ہیں میاں الیاس قریشی سابق مشیر کارادھن اسٹیٹ میں پی ٹی آئی کے صوبائی امیدوار غلام علی اصغر لاہڑی جو قریشی برادری کے قریبی پڑوسی کوٹ چوغطہ سے ہیں گذشتہ دنوں ان دونوں کے درمیان معاہدہ کچھ اس طرح ہوا ہے کہ حلقہ این اے 92میں اصغر لاہڑی گروپ ، قریشی خاند ان کے امیدوار آزاد امیدوار میاں ظفر احمد قریشی کو سپورٹ کرے گا اور اسی معاہدہ کے تحت میاں ظفر احمد قریشی اور غلام علی اصغر لاہڑی ایک دوسرے کو سپورٹ کررہے ہیں جس سے پی ٹی آئی کے قومی امیدوار صاحبزادہ نعیم الدین سیالوی کی پوزیشن آئے روزکمزور ہورہی ہے۔ پی ٹی آئی کے قومی امیدوار کو سب سے پڑا نقصان اپنی یونین کو نسل سیال شریف میں ہورہا ہے یہاں سے سیال شریف کے صاحبزادہ اظہر عباس سیالوی جو صاحبزادہ نعیم الدین سیالوی کے قریبی عزیز ہیں تحریک لبیک سے طرف سے الیکشن لڑ رہے ہیں اور صاحبزادہ نعیم الدین سیالوی کو اس وجہ سے پریشانی کا شکار ہیں دوسرا اس کا بھائی سابق مسلم لیگی ایم پی اے صاحبزادہ غلام نظام الدین سیالوی جو مسلم لیگ (ن) میں 10سال تک ایم پی اے شپ انجوائے کرتے رہے مسلم لیگ (ن)کو چھوڑ کر اپنے بھائی پی ٹی آئی کے امیدوار صاحبزادہ نعیم الدین سیالوی کو سپورٹ کررہے ہیں اس سے مسلم لیگی ووٹرز اور علاقہ کی عوام صاحبزادہ غلام نظام الدین سیالوی کے اس کردار سے نالاں ہوکر ان کے بھائی نعیم الدین سیالوی کی کھلم کھلا مخالفت کررہے ہیں اس طرح حلقہ پی پی 80میں اصل مقابلہ پاکستان مسلم لیگ(ن) کے امیدوار سردار تیمور علی خان اور پی ٹی آئی کے امیدوار سردار غلام علی اصغر خان لاہڑی اور تحر یک لبیک زین عبا س بلو چ کے مابین سخت مقابلہ نظرآرہا ہے جبکہ حلقہ این اے 92میں مسلم لیگی امیدوار سید جاوید حسنین شاہ اور آزاد امیدوار میاں ظفر احمد قریشی کے مابین کانٹے دار مقابلہ ہوگا ۔ لیکن سیاست میں آخر وقت تک سیاسی کروٹ بلدلتی رہتی ہے اسکا فیصلہ 25جولائی کو ووٹرز ہی کریں گے۔

حمایت

مزید : علاقائی


loading...