سپریم کورٹ میں آئین سازوں کے خلاف آرٹیکل 6 کے تحت کاروائی کی درخواست خارج

سپریم کورٹ میں آئین سازوں کے خلاف آرٹیکل 6 کے تحت کاروائی کی درخواست خارج

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)سپریم کورٹ نے آئین سازوں کے خلاف آرٹیکل 6 کے تحت کاروائی کی درخواست خارج کر دی۔چیف جسٹس میاں ثاقب نثارکی سر براہی میں دو رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی درخواست ایڈوکیٹ رخسانہ پیانے دائر کی تھی سماعت کا آغاز ہوا تو درخواست گذار کا کہنا تھا کہ آئین کا آرٹیکل 30 ذیلی شق 2 آئین سے متصادم ہے اس لئے اس کو ختم کیا جائے اور یہ شق ملک میں اسلامی قانون کے نفاذ کی راہ میں رکاوٹ بھی ہے ۔جسٹس اعجازالاحسن نے کہاکہ کیا اس بنیاد پر آئین بنانے والوں کیخلاف آرٹیکل6 کی کاروائی کا حکم دیں؟۔جس پر درخواست گزار کا کہنا تھا کہ ہونا یہی چاہیے آئین سے متصادم آرٹیکل شامل کرنے پر آئین بنانے والوں کے خلاف کاروائی ہو۔چیف جسٹس نے کہاکہ آئینی ترامیم کا جائزہ لینے کے حوالے سے مختلف آرا ء ہیں صرف بنیادی انسانی حقوق سے متصادم آئینی ترمیم کا جائزہ لیا جا سکتا ہے۔عدالت نے قراردیا کہ درخواست میرٹ پر پورا نہیں اترتی اس لئے خارج کی جاتی ہے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...