وہاڑی ، لیگی امید وار آمنے سامنے حلقے میں طوفان،تبصرے

وہاڑی ، لیگی امید وار آمنے سامنے حلقے میں طوفان،تبصرے

وہاڑی( بیورو رپورٹ‘ نمائندہ خصوصی)قومی اسمبلی کے حلقہ این اے163وہاڑی2میں مسلم لیگ ن کے امیدوارقومی اسمبلی ساجدمہدی سلیم کے دونوں ذیلی صوبائی حلقوں کے امیدواروں میاں عرفان دولتانہ اوربلال اکبربھٹی میں اختلافات شدت اختیارکرگئے‘ تینوں امیدواروں نے (بقیہ نمبر51صفحہ12پر )

دیگرامیدواروں کے ساتھ الحاق کرکے الیکشن مہم تیز کردی۔ذرائع کے مطابق مسلم لیگ ن کے امیدوارقومی اسمبلی ساجدسلیم مہدی نے صوبائی ذیلی حلقہ پی پی231 کے مسلم لیگی امیدوارمیاں عرفان عقیل دولتانہ کے خلاف جبکہ آزادامیدواراسلمان شاہدشاہ کے حق میں الیکشن کمپین شروع کردی اسی طرح ذیلی صوبائی حلقہ پی پی232سے مسلم لیگی امیدواربلال اکبربھٹی کی بھی ساجدسلیم مہدی مخالفت اور آزاد امیدوارملک نوشیرلنگڑیال کی حمائت کررہے ہیں۔جس پرمسلم لیگی امیدوارحلقہ پی پی231میاں عرفان عقیل دولتانہ اوران کی والدہ بیگم تہمینہ دولتانہ نے بھی مسلم لیگ ن کے امیدوارساجدسلیم مہدی کی مخالفت کرتے ہوئے پاکستان پیپلزپارٹی کی امیدوارنتاشہ دولتانہ کی حمایت شروع کردی ہے ذرائع کاکہناہے کہ بیگم تہمینہ دولتانہ اوران بیٹے میاں عرفان عقیل دولتانہ نے دولتانہ برادری اوراپنے حمائتیوں کواکٹھاکرکے پی پی پی کی امیدوارنتاشہ دولتانہ کوووٹ دینے کی ہدایت کردی ہے۔صوبائی حلقہ پی پی232سے مسلم لیگی امیدواربلال اکبربھٹی بھی صرف اپنے لئے ووٹ مانگ رہے ہیں اورووٹرزکویہ کہتے نظرآتے ہیں کہ صوبائی اسمبلی کاووٹ مجھے دواورقومی اسمبلی کاووٹ اپنی مرضی سے دے دولیکن ذرائع کاکہناہے کہ بلال اکبربھٹی قومی اسمبلی کاووٹ اس امیدوارکودلوائیں گے جس کیلئے بیگم تہمینہ دولتانہ ان کوکہیں گی اس حلقہ میں مسلم لیگی امیدوارقومی اسمبلی ساجدسلیم مہدی آزادامیدوارملک نوشیرلنگڑیال کی حمائت کرکے ان کی کمپین چلارہے ہیں ذرائع کاکہناہے کہ اس صورتحال میں پاکستان پیپلزپارٹی کی امیدوارنتاشہ دولتانہ اورصوبائی حلقہ پی پی232میں مسلم لیگی امیدواربلال اکبربھٹی کی پوزیشن مضبوط سمجھی جارہی ہے تاہم آزادامیدوارچودھری علی وقاص ہنجرابھی اس صوبائی حلقہ میں اچھاخاصاووٹ بینک رکھتے ہیں پی ٹی آئی کے امیدواراعجازسلطان بندیشہ بھی کافی تگ ودوکررہے ہیں این اے 163وہاڑی2میں پاکستان پیپلزپارٹی کی امیدوار نتاشہ دولتانہ مسلم لیگی امیدوارساجدسلیم مہدی اورآزادامیدوارڈاکٹرعارفہ نذیرجٹ کے درمیان کانٹے دارمقابلہ کی توقع کی جارہی ہے جبکہ پی ٹی آئی کے امیدوارنواب اسحاق خان خاکوانی پانچ سال تک حلقہ کی عوام سے دوررہنے کی وجہ سے اپنی بقاکی جنگ لڑنے میں مصروف ہیں قومی اسمبلی کے حلقہ163اوردونوں صوبائی حلقوں میں امیدواروں کے اختلافات کوووٹرزخوب انجوائے کررہے ہیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...