شریف برادران جتنی مخالفت کر لیں ، بھاری لیڈ سے جیتوں گا : اعجاز الحق

شریف برادران جتنی مخالفت کر لیں ، بھاری لیڈ سے جیتوں گا : اعجاز الحق

فقیروالی ( نمائندہ خصوصی ) پاکستان مسلم لیگ ضیاء کے سربراہ اعجاز الحق نے کہا ہے کہ گزشتہ قومی الیکشن کے دوران میں نے جلسہ عام میں خطاب کرتے ہوئے پاکستان مسلم لیگ نواز کے صدر چھوٹے بھائی شہباز شریف کو ہارون آباد میں جلسہ کرنے سے منع کیا تھا‘ لیکن وہ آئے‘ اس کے باوجود اللہ تعالیٰ نے مجھے پچیس ہزار ووٹوں سے برتری دِلائی ۔ اِس(بقیہ نمبر15صفحہ12پر )

بار بھی میں نے چھوٹے میاں صاحب کو میسج کیا کہ اگر اب میرے حلقے میں آئے تو انشاء اللہ دُگنی لیڈ سے جیتوں گا۔ انہوں نے کہا میرے مخالفین کہتے ہیں کہ میں اسلام آباد میں رہتا ہوں لیکن ہر ماہ 10-15دِن حلقہ میں بھی رہتا ہوں۔ مسلم لیگی رہنماء نے کہا کہ جب سابق وزیر اعظم ظفراللہ خان جمالی کو 271ووٹ ملے تو کامیابی کے لئے فقط ایک ووٹ کی ضرورت تھی۔ چنانچہ میرا ہی ایک ووٹ فیصلہ کن ثابت ہوا اور وہ وزیراعظم منتخب ہو گئے۔ انہوں نے یاد دلایا کہ سابق وزیر اعظم نواز شریف کو جب نااہل قرار دے دیا گیا تو شاہد خاقان عباسی نے مجھے میسج کیا کہ میں وزارت عظمیٰ کو قبول کروں یانہ کروں تو میں نے انہیں جواباً کہا کہ میں تمہارا دوست ہوں ۔ قدرت نے آپ کو موقع دیا ہے اُس سے فائدہ اٹھانا چاہئے۔ تو انہوں نے کہا کہ آپ کو بظاہر 45دن کے لئے وزیراعظم بنایا گیا ہے لیکن ایسا لگتا ہے کہ اب لمبی مدت تک اقتدار میں رہیں گے ، چنانچہ ایسا ہی ہوا۔ اعجاز الحق نے کہا کہ سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے مجھ سے وعدہ کیا کہ وہ فورٹ عباس کو سوئی گیس کی فراہمی کے لئے پچاس کروڑ روپے گرانٹ مہیا کریں گے اور اس مقصد کیلئے انہوں نے متعلقہ محکموں کو ذمہ داری سونپ دی ۔ انہوں نے یقین دلایا کہ اب نئی حکومت میں فورٹ عباس کو ترجیحی بنیادوں پر یہ سہولت فراہم کی جائے گی۔ اعجاز الحق اور ضیاء لیگ کے امیدوار ایم پی اے نعمان جاوید کی موجودگی میں محمد اقبال عباسی صدر عباسی برادری نے ہزاروں افراد سمیت مسلم لیگ ضیاء کی مکمل حمایت کا یقین دلایا۔ اعجازالحق نے چوہدری غلام مرتضیٰ کے ہمراہ فقیروالی اور یتیم والا میں مختلف پارٹی کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ برادری ازم پر یقین نہیں رکھتے اور بلا امتیاز تمام برادریوں کے اعتماد پرپورا اتریں گے ۔ انہوں نے یقین دلایا کہ آنے والے دنوں میں پاکستان مسلم لیگ ضیاء اور پی ٹی آئی کے درمیان اشتراک کے مثبت اور دور رَس اثرات سامنے آئیں گے اور جو لوگ اب ذاتی مفادات کے لئے قومی سوچ کو پس پشت ڈال رہے ہیں وہ علاقے کے عوام سے دشمنی کے مرتکب ہوں گے۔ ہارون آبادمیں سیاسی سرگرمیاں عروج پرپہنچ گئی ہیں۔ پی ٹی آئی کے رہنماء و سابق وفاقی وزیر محمد افصل سندھو گروپ نے الیکشن 2018 کے لئے اپنے سینکڑوں ساتھیوں سمیت وائیٹل گروپ کی حمائت کا اعلان کر دیا۔ہارون آباد میں الیکشن کے دن جیسے جیسے قریب آ رہے ہیں ویسے ویسے سیاسی اکھاڑے میں نت نئے جوڑ کے ساتھ سیاسی پہلوان سامنے آ رہے ہیں جس سے الیکشن میں عوام کی دلچسپی کے اظہار کا پتہ چلتا ہے۔ ہارون آباد میں پی ٹی آئی چوہدری محمد افضل سندھو سابق ٹکٹ ہولڈر کے گروپ نے نیاز احمد رندھاوا،محمد بوٹا جنرل کونسلر،لیاقت علی نمبر دار،ماسٹر محمد افضل،ملک اللہ دتہ نے سینکڑوں ساتھیوں سمیت مسلم لیگ (ضیاء) وائٹل گروپ کی حمائیت کا اعلان کر دیا۔ نیاز احمد رندھاوا نے میڈیا سے خصوصی گفتگو میں کہا کہ محمد افضل سندھو کی قیادت میں ہمارے گروپ نے جس میں شہری علاقوں کے علاوہ بارڈر ایریا کے چکوک کے سینکڑوں پی ٹی آئی ورکرز نے عمران خان کی آواز پر لبیک کہتے ہوئے مسلم لیگ (ضیاء) وائٹل گروپ کی حمائت کا اعلان کیا ہے اور الیکشن 2018میں حلقہ این اے 169 سے محمد اعجاز الحق اور پی پی 243 سے چوہدری غلام مرتضی کو بھاری ووٹوں کی اکثریت سے کامیاب کرائیں گے۔اس موقع پر محمد افضل سندھو بے بزریعہ ٹیلی فون محمد اعجاز الحق اور چوہدری غلام مرتضی سے گفتگو میں اپنی بھرپور حمائت کا یقین دلایا۔

اعجازالحق

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...