دنیا کی واحد جیل جہاں قیدیوں کو شاپنگ کرنے کی بھی اجازت ہے، اور کیا کیا سہولیات ہیں؟ جان کر لوگوں کا دل کرے اُدھر ہی جاکر رہنے لگ جائیں

دنیا کی واحد جیل جہاں قیدیوں کو شاپنگ کرنے کی بھی اجازت ہے، اور کیا کیا ...
دنیا کی واحد جیل جہاں قیدیوں کو شاپنگ کرنے کی بھی اجازت ہے، اور کیا کیا سہولیات ہیں؟ جان کر لوگوں کا دل کرے اُدھر ہی جاکر رہنے لگ جائیں

  


لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) جیل جانے کا تصور ہی انسان کے رونگٹے کھڑے کر دینے کے لیے کافی ہے مگر برطانیہ کی ایک جیل میں قیدیوں کو ایسی آسائشیں دی جاتی ہیں کہ سن کر باہر آزاد پھرنے والے لوگ بھی جیل جانے کی آرزو کریں گے۔ میل آن لائن کے مطابق یہ برطانیہ کی بروائن جیل ہے جو شمالی ویلزمیں واقع ہے۔ یہاں قیدیوں کو ماہانہ 1ہزار پاﺅنڈ (تقریباً 1لاکھ98ہزار روپے)کی شاپنگ کرنے کی اجازت ہے۔ وہ ڈی وی ڈی سمیت ہر طرح کی الیکٹرونکس اشیائ، فون کریڈٹ، کپڑے، ٹوائلٹریز، غرض جو ان کا من چاہے خرید سکتے ہیں اور جیل میں استعمال کر سکتے ہیں۔ اس جیل کو برطانیہ کی آسان ترین جیل کہا جاتا ہے۔جیل میں قیدیوں کے پاس لیپ ٹاپ بھی ہیں جس کے ذریعے وہ اپنی ملاقاتوں کا انتظام کرتے ہیں، کھانا اور مشروبات وغیرہ سمیت دیگر اشیاءآرڈر کرتے ہیں۔ جیل میں موجود دکان میں 1ہزار سے زائد قسم کی اشیاءموجود ہیں۔ تاہم یہ قیدیوں کی مرضی ہے کہ وہ وہاں سے شاپنگ کریں یا آن لائن آرڈر کر لیں۔

بروائن جیل میں قیدیوں کو اس قدر آسانیاں اور آسائشیں فراہم کی جاتی ہیں کہ برطانوی اراکین پارلیمنٹ نے گزشتہ دنوں اسے ہدف تنقید بنایا ہے۔ پارلیمنٹ میں خطاب کرتے ہوئے کئی اراکین کا کہنا تھا کہ ”بروائن جیسی جیلیں جرائم پیشہ افراد کے لیے ’ہولیڈے کیمپس‘ بنی ہوئی ہیں۔ لوگ جرم کرتے ہیں اور پھر ایسی جیلوں میں جا کر مزے سے رہتے ہیں۔“رکن پارلیمنٹ فلپ ہولوبون کا کہنا تھا کہ ”بروائن جیل کے متعلق جو انکشاف ہوا ہے، یہ سن کر لوگ یقین ہی نہیں کر پا رہے کہ وہاں قیدیوں کو ماہانہ اتنی بڑی رقم خرچ کرنے اور ہر طرح کی پرآسائش اشیاءاپنے سیلز میں رکھنے کی اجازت ہے۔ اس انکشاف کے بعد یہ جیل کم اور سپرمارکیٹ زیادہ لگ رہی ہے۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس