سینیٹر سراج الحق کا 13 جولائی کو تاجر تنظیموں کی ملک گیر ہڑتال کی حمایت کا اعلان

 سینیٹر سراج الحق کا 13 جولائی کو تاجر تنظیموں کی ملک گیر ہڑتال کی حمایت کا ...
 سینیٹر سراج الحق کا 13 جولائی کو تاجر تنظیموں کی ملک گیر ہڑتال کی حمایت کا اعلان

  


لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے 13 جولائی کو تاجر تنظیموں کی ملک گیر ہڑتال کی حمایت کا اعلان کرتے ہوئے کہاہے کہ جماعت اسلامی تاجروں کو تنہا نہیں چھوڑے گی،حکومت آئی ایم ایف کے دباؤ پر تاجروں کو دباؤ میں لانے اور ان کے کاروبار ختم کرنے پر تلی ہوئی ہے۔ تنظیم تاجران کے مرکزی صدر کاشف چوہدری کے رابطہ پر سینیٹر سراج الحق نے انہیں تاجروں کی ہڑتال کی مکمل حمایت کا یقین دلاتے ہوئے کہاکہ حکومت کے ظالمانہ اقدامات ناقابل برداشت ہوچکے ہیں،حکومتی اقدامات کی وجہ سے ملک میں کاروبار زندگی ٹھپ ہوچکاہے ،ہزاروں چھوٹے صنعتی یونٹ اور گھریلودستکاریاں بند ہونے سے لاکھوں لوگوں کا روزگار ختم ہوگیاہے ،لوگ مہنگائی ، بے روزگاری کے ہاتھوں تنگ آ کر خود کشیوں پر مجبور ہوچکے ہیں،عوام مہنگائی اور غربت کی چکی میں پس رہے ہیں اور حکمران ہر روز آئی ایم ایف کے حکم پر نئے نئے ٹیکس متعارف کروا رہے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ حکومت محض آئی ایم ایف کو خوش کرنے کے لیے تاجربرادری پر دباؤ ڈال رہی ہے،حکومت نے کسی معاملے میں بھی تاجر برادری اور منتخب ایوان کو اعتماد میں نہیں لیا اور عوام کو چارہ بنا کر آئی ایم ایف کے آگے ڈال دیاگیاہے ۔ انہوں نے سوال کیا کہ کیا حکومت نے اپنی نااہلی اور نالائقی سے عوام کو مارنے کا ٹھیکہ لے رکھاہے؟پاکستانی عوام کے ساتھ آئی ایم ایف کا رویہ قصائیوں جیسا ہے حکومتی پالیسیوں سے تمام شعبہ ہائے زندگی کے لوگ تنگ آچکے ہیں،صنعت اور زراعت تباہی کے دھانے پر ہے کسان اور مزدور کا کوئی پرسان حال نہیں ۔انہوں نے کہاکہ حکمران کہتے تھے کہ وہ ملک سے غربت کا خاتمہ کریں گے مگر ان کی پالیسیوں سے روزانہ لاکھوں کی تعداد میں لوگ غربت کی لکیر سے نیچے لڑھکتے جارہے ہیں،حکومت کا سارا زور کولیکشن پر ہے جنریشن کی طرف توجہ نہیں۔

مزید : قومی