تقسیم ہوکر دنیا کورونا کو شکست نہیں دے سکتی، ڈبلیو ایچ او

تقسیم ہوکر دنیا کورونا کو شکست نہیں دے سکتی، ڈبلیو ایچ او

  

نیو یارک (آن لا ئن) عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے کہا ہے کہ دنیا کورونا کے ہاتھوں یرغمال ہے، تقسیم ہو کر دنیا اس بیماری کو شکست نہیں دے سکتی۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ڈائریکٹر جنرل ڈبلیو ایچ او ٹیڈروس گیبرئیس نے یہ بات امریکہ کے عالمی ادارہ صحت سے علیحدگی کے تناظر میں کہی۔انھوں نے کہا کہ کورونا سے لڑنے کے لیے اکٹھے ہونا ہی حل ہے۔واضح رہے کہ امریکہ نے باضابطہ طور پر عالمی ادارہ صحت سے علیحدگی اختیار کرنا شروع کردیا ہے۔امریکہ نے عالمی ادارہ صحت سے باضابطہ طورپر دست بردار ہونے کیلئے نوٹس سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ انتونیو گوٹریس کو پہنچا دیا ہے جس کی تصدیق وائٹ ہاؤس نے کردی ہے۔ٹرمپ انتظامیہ کے ایک سینئر عہدیدار نے بتایا کہ دست برداری کے لئے ایک سال پہلے نوٹس دیا جاتا ہے۔ اس لئے امریکہ 6 جولائی 2021ء تک ڈبلیو ایچ او سے علیحدگی اختیار نہیں کرسکتا۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپریل میں الزام لگایا تھا کہ عالمی ادارہ صحت کورونا وائرس کے پھیلاؤسے متعلق بروقت اور شفاف معلومات دینے میں ناکام رہا ہے، اس لیے امریکہ عالمی ادارے کی تقریبا 50 کروڑ ڈالرز کی سالانہ امداد روک لے گا۔دوسری جانب امریکہ کے ڈیموکریٹ صدارتی امیدوار جو بائیڈن نے کہا ہے کہ وہ صدر منتخب ہوئے تو امریکہ پہلے ہی روز عالمی ادارہ صحت میں دوبارہ شمولیت اختیار کرلے گا۔

ڈبلیو ایچ او

مزید :

صفحہ اول -