اثاثہ جا ت کیس،شہباز شریف کے وکلا کو دلائل مکمل کرنیکا آخری موقع

اثاثہ جا ت کیس،شہباز شریف کے وکلا کو دلائل مکمل کرنیکا آخری موقع

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج جواد الحسن نے میاں شہباز شریف خاندان کے اثاثہ جات منجمدکرنے کے خلاف دائر اعتراضات پرمیاں شہباز شریف کے وکلا ء کو اعتراضات پر دلائل مکمل کرنے کا آخری موقع دیتے ہوئے مزیدسماعت 25 اگست پر ملتوی کردی ہے۔گزشتہ روزمیاں شہباز شریف کے وکیل امجد پرویز عدالت میں پیش نہیں ہوئے،امجد پرویز کی جگہ ان کے جونیئرسلمان سرور ایڈووکیٹ نے عدالت میں پیش ہو کرموقف اختیار کیا کہ ای ایم ای سوسائٹی لاک ڈاؤن کے باعث سیل ہے، جس کے باعث امجد پرویز عدالت پیش نہیں ہوسکتے،عدالت نے مذکورہ بالاحکم جاری کرتے ہوئے کیس کی مزید سماعت آئندہ تاریخ پیشی تک ملتوی کردی،اس کیس میں نیب کی جانب سے میاں شہباز شریف کی درخواست پر جواب جمع کروایا جاچکا ہے،جس میں کہاگیاہے کہ شہباز شریف فیملی کے خلاف منی لانڈرنگ اور غیر قانونی اثاثوں کے الزامات پر تفتیش جاری ہے، شہباز شریف نے اپنی بیویوں کے نام پر جائیدادیں بنا رکھی ہیں، شہباز شریف فیملی جائیدادوں کے ذرائع بتانے میں ناکام رہے، منی لانڈرنگ ایکٹ اور فنانس ایکٹ کے مطابق جائیدادوں کے ذرائع بتانا لازم ہے، شہباز شریف خاندان سے جائیدادوں کے متعلق بار بار جواب مانگا گیا، شہباز سمیت انکی فیملی جواب دینے میں ناکام رہی، شہباز شریف سمیت دیگر کے اثاثہ جات قانون کے مطابق منجمد کئے گئے ہیں جبکہ میاں شہباز شریف کے وکلاء کا موقف ہے کہ انویسٹی گیشن کے دوران اثاثے منجمد نہیں کئے جاسکتے، میاں شہباز شریف، سلمان شہباز سمیت خاندان کے دیگر افرادکے اثاثے منجمد کرنے کے حکم پر نظرثانی کی جائے۔

اثاثہ جا ت کیس

مزید :

صفحہ آخر -