دودھ چوری کے الزام میں 8سالہ بچی پر تشدد کے خلافقرارداد اسمبلی میں جمع

دودھ چوری کے الزام میں 8سالہ بچی پر تشدد کے خلافقرارداد اسمبلی میں جمع

  

لاہور(نمائندہ خصوصی،لیڈی رپورٹر)مسلم لیگ(ن) کی رکن حنا پرویز بٹ نے واپڈا ٹاؤن لاہور میں 8سالہ گھریلو ملازمہ ثناء پر بہمانہ تشدد کیخلاف پنجاب اسمبلی میں قرارداد جمع کراد ی۔ لاہور کے علاقہ واپڈا ٹاؤن میں 8سالہ بچی پر دودھ چوری کے الزام میں بہیمانہ تشدد کیا ہے۔مالک حماد رضا نے پانچ روز تک مسلسل بچی کو بھوکا رکھا۔معصوم اور کسن ملازمہ پر بہمانہ تشدد انتہائی قابل مذمت ہے۔

۔پنجاب حکومت کے پاس کردہ ”گھریلوورکرز تحفظ بل“ کی خلاف کھولے عام ہو رہی ہے۔بل کے مطابق 15 سال سے کم عمر کے بچے کو ملازم رکھنے پر بھی جرمانہ ہوگا، چائلڈ لیبر کے مرتکب مالک کو ایک ماہ تک قید کی سزا ہوگی۔گھریلو ورکر رکھنے کے لیے تحریری معاہدہ ضروری ہوگا جو لیبر انسپکٹر کو فراہم کیا جائے گا، معاہدے کی پاس داری نہ کرنے پر 5 سے 10 ہزار روپے جرمانہ ہوگا۔یہ ایوان حکومت سے مطالبہ کرتا ہے کہ گھریلو ورکرز تحفظ بل پر حقیقی معنوں میں عملدرآمد یقینی بنایا جائے۔کم عمر گھریلو ملازمین رکھنے والے مالکان کیخلاف فوری کریک ڈا?ن کیا جائے۔8سالہ گھریلو ملازمہ ثناء پر تشدد کرنے والے مالک کیخلاف فوری قانون کے مطابق کاروائی عمل میں لائی جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -