جندول، بجلی لوڈشیڈنگ اور کم وولیٹج کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

جندول، بجلی لوڈشیڈنگ اور کم وولیٹج کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

  

 جندول(نمائندہ پاکستان)جندول اہلیان معیار جندول کا لوڈشیڈنگ اور کم وولٹیج کے خلاف احتجاج۔شاہراہ جندول کو کئی گھنٹے تک ٹریفک کیلئے بند کر دیاجس کی وجہ سے گاڑیوں کی لمبی لمبی قطاریں لگ گئی۔بعد ازاں اسسٹنٹ کمشنر اور واپڈاء اہلکاروں کیساتھ مذاکرات کے بعد روڈ کو ٹریفک کیلئے کھول دیا گیا۔تفصیلات کے مطابق آل پارٹیز کی جانب سے جمعہ کے روز صبح معیار بازار سے جلوس نکالا گیا جلوس نے سجاد شہید چوک پر جلسہ کی صورت اختیار کر لی۔اس موقع پر مختلف سیاسی جماعتوں کے مشران شفیع اللہ خان، اکرام خان، پیرجاوید اقبال، سلطان جاوید،احسان الحق،اعجاز و دیگر نے احتجاجی جلوس کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گذشتہ کئی دنوں سے شدید لوڈشیڈنگ کم وولٹیج اور بجلی نمبر نے عوام کا جینا مشکل کر دیا ہے انہوں نے کہا کہ جولائی کے مہینہ میں روزانہ بیس گھنٹے لوڈشیڈنگ کیا جاتا ہے اور وولٹیج بھی کم ہوتا ہے جس کی وجہ سے گھروں اور مساجد میں ضرورت کا پانی ناپید ہو جاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ مذکورہ مسئلہ کے بارے میں بار بار انتظامیہ اور واپڈاء حکام سے شکایت کی مگر شنوائی نہیں ہوئی۔اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر جندول طارق حسین اور ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر یونس خان موقع پر پہنچ گئیں۔انہوں نے مظاہرین سے مذاکرات کرتے ہوئے کہا کہ واپڈاء حکام اور منتخب ممبر قومی اسمبلی محمد بشیرخان نے چند روز قبل منعقد میٹنگز کے دوران عوام سے معیار اور گوسم بجلی بحالی اور کم وولٹیج ختم کرنے کیلئے اتوار کے روز تک کا وقت مانگ لیا تھا کہ اس مقررہ وقت تک انتظار کیا جائے۔انتظامیہ کے افسران نے مظاہرین کو بتایا کہ مذکورہ مسئلہ افسران بالا کے نوٹس میں لایا جائے گا اور جلد ہی لوڈشیڈنگ و کم وولٹیج کا مسئلہ حل کرایا جائے گا جس کے بعد مظاہرہ منتشر کیا گیا

مزید :

پشاورصفحہ آخر -