وہ ممالک جہاں کام کرنے والے 95فیصد پاکستانی پائلٹس کلیئر قرار

وہ ممالک جہاں کام کرنے والے 95فیصد پاکستانی پائلٹس کلیئر قرار
وہ ممالک جہاں کام کرنے والے 95فیصد پاکستانی پائلٹس کلیئر قرار

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) جعلی یا مشکوک  سرٹیفکٹس پر پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائن میں بطور پائلٹس بھرتی ہونے والوں کے خلاف حکومت پاکستان کے ایکشن کے بعد دنیا بھرمیں کام کرنے والے پاکستانی پائلٹس کی ساکھ پر سوالیہ نشان اٹھے ہیں۔

ایسے میں کئٰی ممالک نے پاکستان سے تعلق رکھنے والے پائلٹس کو گراونڈ کرکے پاکستان ایوی ایشن سے ان کے کوائف کی تصدیق کروائی  جس پر ادارے کی جانب سے سات ممالک میں کام کرنے والے 95فیصد پائلٹس کی تصدیق کرکے متعلقہ ممالک کے حکام کو اطلاع کردی گئی ہے۔

ڈان نیوز کے مطابق جن ممالک میں کام کرنے والے پاکستانی پائلٹس کلیئر قرارپائے ہیں ان میں متحدہ عرب امارات، ملائیشیا، ویتنام، ترکی ، بحرین، ایتھوپیا اور ہانگ کانگ شامل ہیں۔

ڈان نے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ  ویتنام نے   11 پاکستانی پائلٹوں کی تصدیق کا کہا تھا جس میں سے 10 کی تصدیق کر کے متعلقہ حکام تک بھجوادی گئیں ہیں جبکہ بقیہ ایک کی تصدیق آئندہ منگل تک مکمل ہوجائے گی۔

2 جولائی کو سول ایوی ایشن اتھارٹی ملائیشیا نے ملائیشیا میں کام کرنے والے  14 پائلٹوں کے لائسنس کی تصدیق کے لیے فہرست سی اے اے کو بھجوائی تھی جس میں سے تمام پائلٹوں کی اسناد کی تصدیق کے بعدملائیشین حکام کو آگاہ کردیا گیا۔

متحدہ عرب امارات کی مختلف ایئرلائنز میں 54 پاکستانی پائلٹس ملازمت کرتے ہیں جن میں سے48 کی تصدیق کا عمل مکمل ہوگیاہے۔

 ترکی نے بھی 19 پائلٹوں کے لائسنسز کی تصدیق کے لیے پاکستانی حکام سے رابطہ کیا جس میں 18 کی تصدیق مکمل جبکہ ایک کی زیر التوا ہے۔

بحرین نے تین پائلٹس کی تصدیق چاہی تھی دو کی کردی گئی ہے تیسرے کے کوائف کی تصدیق کا عمل جاری ہے۔

ہانگ کانگ سول ایوی ایشن اتھارٹی نے بھی 3 پاکستانی پائلٹوں کے لائسنس کی تصدیق کے لیے رابطہ کیا تھا جس میں 2 پائلٹوں کو کلیئر کردیا گیا جبکہ ایک پر کارروائی آئندہ ہفتے مکمل ہوجائے گی۔

مزید :

قومی -بین الاقوامی -